پنجاب میں کرپشن کا نیا اسکینڈل بے نقاب

Police Audit Report Lhr Tehelka Pkg 28-12

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/12/Police-Audit-Report-Lhr-Tehelka-Pkg-28-12.mp4"][/video]

لاہور : محکمہ داخلہ پنجاب کے ماتحت پوليس سميت ديگر محکموں ميں خرد برد اربوں روپے تک پہنچ گئی، آڈٹ رپورٹ سب سامنے لے آئی۔

پنجاب ميں محکمہ داخلہ کے اربوں کے گھپلے کا انکشاف ہوگیا، پوليس، جيل خانہ جات، ٹريفک پوليس ہر شعبے میں بہتی گنگا میں ہاتھ دھوئے گئے، آڈٹ رپورٹ نے بھانڈا پھوڑ دیا۔

آڈٹ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ محکمہ پولیس پنجاب میں پیٹرول، اسٹيشنری اور يونيفارم کی خريداری ميں 34 کروڑ کی ہير پھير کی گئی، ہتھياروں اور گاڑيوں کی چوری ميں 27 کروڑ روپے کا غبن کیا گیا۔

آڈٹ رپورٹ نے محکمہ داخلہ کا کچا چٹھا کھول کر رکھا دیا، بوگس ملازمتوں کے ساتھ ساتھ ايک ارب روپے کی تنخواہوں کی ادائيگی بھی مشکوک قرار دی گئی۔

پوليس سے جواب مانگا گيا تو يہ کہہ کر جان چھڑالی کہ دہشت گردی کیخلاف جنگ ميں ضرورت سے زائد اخراجات کرنا پڑے۔

رپورٹ کے مطابق محکمہ جيل خانہ جات نے بھی ايک ارب 81 کروڑ روپے کھانے پينے کی اشياء ميں خرد برد کئے، ٹريفک پوليس بھی پيچھے نہ رہی اور ايک کروڑ روپے کے چالان اور ملازمين کو کئے گئے ڈيڑھ کروڑ روپے کے جرمانے بھی ہڑپ کرلئے گئے۔ سماء

PUNJAB

TRAFFIC POLICE

AUDIT REPORT

Interior Ministry Punjab

Prison Department

Tabool ads will show in this div