Technology

پاکستان نیوکلئیرٹیکنالوجی پرامن مقاصدکےلیےاستعمال کرےگا

United-Nations-Headquarters

نیویارک: پاکستان نے سول ایٹمی تعاون کو فروغ دینے اور نیوکلیئر سپلائرزگروپ میں رکنیت کیلئے یکساں ،غیر امتیازی اورطریقہ کار پر مبنی سوچ اپنانے کے اپنے مطالبے کااعادہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ نیو کلیئر ٹیکنالوجی کو امن و استحکام کیلئے استعمال کرنے کے عزم پر قائم رہتے ہوئے اپنے جوہری توانائی کے منصوبوں اور ریسرچ ری ایکٹرز کی جوہری سلامتی و تحفظ کی بہتری کیلئے اقدامات جاری رکھے گا۔

اقوام متحدہ میں پاکستان کے نائب مستقل مندوب نبیل منیر نے جنرل اسمبلی میں جوہری توانائی کے عالمی ادارے (آئی اے ای اے) کی سالانہ رپورٹ پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے امن و ترقی کے لئے ایٹمی ٹیکنالوجی کے استعمال کیلئے پاکستان کی کوششوں کو اجاگر کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی حکومت اپنے ایٹمی بجلی گھروں کے تحفظ کو اولین ترجیح دیتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان کے جوہری توانائی کی صلاحیت میں آئندہ دوعشروں کے دوران خاطر خواہ اضافہ کیا جائے گا تاکہ ملک کی توانائی کی بڑھتی ہوئی ضرورت کو پورا کیا جاسکے۔

 انہوں نے کہاکہ پاکستان نے ہمیشہ ایک مضبوط، محفوظ اور ریگولیٹری بنیادی ڈھانچہ تعمیر کرنے پر توجہ دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ نیشنل اٹامک ایجنسی کمیشن جوہری توانائی کے علاوہ 18 اسپتالوں پر مشتمل نیٹ ورک کے ذریعے علاج معالجہ کی سہولیات بھی فراہم کررہا ہے جہاں ہر سال کینسر کے 80 فیصد مریضوں کا علاج کیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان سول ایٹمی تعاون کو فروغ دینے اور نیوکلیئر سپلائرزگروپ میں رکنیت کیلئے یکساں ،غیر امتیازی اورطریقہ کار پر مبنی سوچ اپنانے کے اپنے مطالبے کااعادہ کرتا ہے۔ ایجنسی / سماء

UNITED NATION

Tabool ads will show in this div