کوئی پاکستانی ٹیم کوکمزورنہ سمجھے،کارکردگی پربھروسہ کرناہوگا

MICKEY ARTHUR PKG 12-12 IRSHAD برسبین : قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر کہتے ہیں کہ کرکٹ آسٹریلیا نے انہیں کوچنگ سے ہٹا کر غلطی کی پاکستان کے خلاف سیریز میں وہ یہ بات ثابت بھی کردیں گے۔ بریسبین آمد پر میڈیا سے گفت گو میں پاکستان کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے کہا ہے کہ پاکستانی بلے باز بہت اچھے ہیں، ان کی قابلیت پر بھروسہ کرنا ہو گا، اسد شفیق اور بابر اعظم کا مستقبل تابناک ہے، آسٹریلوی ٹیم برصغیر میں پریشانی کا شکار ہوتی ہے جبکہ برصغیر کی ٹیموں کو آسٹریلیا میں مشکلات پیش آتی ہیں، تاہم کھلاڑیوں کا جلد ماحول سے ہم آہنگ ہونا ہی اچھا ہے کیونکہ اس کے بغیر اچھی کارکردگی ممکن نہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی بلے بازوں نے پریکٹس میچ میں اچھا پرفارم کیا ہے۔ اگرچہ انہیں کچھ مشکلات پیش آئیں لیکن آسٹریلین ٹیم کی دیگر ممالک میں اتنا پراعتماد ہو کر نہیں کھیل پاتی۔ آسٹریلیا کی کنڈیشنز مشکل تو ہیں لیکن پاکستانی ٹیم اچھی پرفارمنس کیلئے بالکل تیار اور پرعزم ہے۔ کرکٹ آسٹریلیا کو غلط ثابت کرنے کاعزم ،پاکستانی ٹیم کو کوئی کمزور نہ سمجھے،ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے بلے بازوں کو سنبھل کر کھیلنے کا مشورہ دے دیا۔ کوچ مکی آرتھر کہتے ہیں کہ سیریز میں مشکل ہے لیکن پاکستانی ٹیم آسٹریلیا کو شکست دینے کی بھرپور صلاحیت رکھتی ہے۔ ہیڈ کوچ نے کہا کہ اگر بلے باز 270 سے 300 رنز بنا لیں تو باﺅلر میں اتنی صلاحیت ہے کہ وہ مخالف ٹیم کو آﺅٹ کر سکیں۔ انہوں نے اسد شفیق اور بابراعظم کی بیٹنگ تکنیک کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ یہ دونوں مستقبل میں بہترین بلے باز ثابت ہوں گے۔ واضح رہے کہ پاک آسٹریلیا ٹیسٹ سیریز کا آغاز پندرہ دسمبر سے ہوگا۔ سماء

pakistan cricket team

PakvsAus

MICKEY ARTHUR

Tabool ads will show in this div