بلوچستان میں بھی موذی مرض پنجے گاڑھنے لگا

Aids balochistan 2100 QTA Pkg 05-12

کوئٹہ : بلوچستان میں کوئلہ کانوں میں کام کرنیوالے مزدوروں اور قیدیوں میں ایڈز کا مرض تيزی سے پھیلنے کا انکشاف ہوا ہے، محکمہ صحت نے مثاثرہ علاقوں میں اسکریننگ کا عمل شروع کردیا۔

بلوچستان میں تیزی سے ایڈز پھیلنے کا خدشہ ہے، کانوں میں کام کرتے مزدور اور قیدی مرض کا زيادہ شکار ہورہے ہیں، مثاثرہ علاقوں میں اسکریننگ کا عمل شروع  کردیا گیا۔

محکمہ صحت بلوچستان نے خبردار کردیا، حکام کہتے ہیں صوبے میں  ایڈز سے متاثرہ رجسٹرڈ مریضوں کی تعداد 637 ہے، جن میں 421 کا تعلق کوئٹہ اور 216 کا تربت سے ہے۔

گڈانی جیل میں بھی 21 قیدیوں میں بھی موذی مرض کی تصدیق ہوئی ہے جبکہ صوبے کی ایک کوئلہ کان میں 24 مزدوروں کے ایڈز سے متاثر ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

محکمہ صحت بلوچستان میں منشیات کے عادی افراد کو ایڈز کے  پھیلاؤ کی بڑی وجہ قرار دیتے ہیں۔ حکام کے مطابق بلوچستان کی جیلوں میں قیدیوں میں ایڈز کی اسکریننگ شروع کردی جبکہ ایڈز کی تشخیص کیلئے اسکریننگ سینٹرز بھی قائم کئے جارہے ہیں۔ سماء

HEALTH

Miners

Drug Addicts

Tabool ads will show in this div