فوجی چھاؤنیوں کاملک کےدفاع میں مضبوط کردار

Army Cantonments Isb Pkg ZOHAB H 13-11

[video width="640" height="360" mp4="http://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/11/Army-Cantonments-Isb-Pkg-ZOHAB-H-13-11.mp4"][/video]

اسلام آباد: ملکی دفاع کو مضبوط بنانے میں فوجی چھاؤنیوں کا بڑا کردار رہاہے۔ سوات کینٹ کے افتتاح کے بعد ملک میں فوجی چھاؤنیوں کی تعداد چوالیس ہوگئی ہے۔

دشمن ملک کی چالاکیوں پر نظر رکھنا ہو یا اندرون ملک وطن دشمنوں سے نمٹنا ہو،ملکی دفاع کوناقابل تسخیر بنانے میں فوجی چھاؤنیوں کا کردار ہردورمیں اہم رہا ہے۔ قیام پاکستان کے وقت چند بڑے شہروں کے قریب کنٹونمنٹس موجود تھے۔ وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ ملک کے کئی علاقوں میں فوجی چھاؤنیاں قائم کی گئیں۔

فوجی چھاؤنیوں کے ذریعے ان علاقوں میں موجود دفاعی اثاثہ جات کی حفاظت اورسرحدی علاقوں کی نگرانی کو موثر بنایا جاتا ہے۔اس وقت پاکستان میں بڑی چھاؤنیاں 44 ہیں ۔ بلوچستان میں 7 ، خیبرپختونخوا میں 12 ، پنجاب میں 16 اور سندھ میں 9 چھاونیاں بنائی گئی ہیں۔

ملکی سلامتی کے پیش نظر آزاد کشمیر اور شمالی علاقہ جات کے کچھ علاقوں میں بھی فوج موجود ہے۔ ان چھاؤنیوں کے قیام سے پاک فوج کے اہلکاروں کے ساتھ ساتھ مقامی آبادی کو بھی بہترین اسکولز اور اسپتالوں کی سہولیات میسر ہیں۔ سماء

pak army

CANTT

army cantonments

Tabool ads will show in this div