سندھی ثقافت دن پر سندھی ٹوپی اور اجرک کی خریداری عروج پر

اسٹاف رپورٹ
کراچی : سندھی ثقافت کے دن پر جہاں لوگوں میں جوش خروش پایا جاتا ہے وہی  اسے بھرپور طریقے سے منانے کیلئے شہری بڑی تعداد میں سندھی ٹوپی اور اجرک کی خریداری  بھی کر رہے ہیں۔

سندھ کی ثقافت کا شمار دنیا کی قدیم ترین ثقافتوں میں ہوتا ہے۔ سندھی ٹوپی اوراجرک   ہزاروں سال سے سندھ کے خطہ کی تہزیب اور روایت کی علامت ہیں۔ یہ شال خطہ کے لوگوں کا قدیم پہناوا ہے۔

حکومت نے سندھ کے ثقافتی ورثے کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لئے انیس نومبر کو سندھ بھر میں یوم ثقافت منانے کا اعلان کیا ہے۔ سندھی قومیت سے تعلق رکھنے والوں کے علاوہ دوسری قومیتوں سے تعلق رکھنے والے بھی سندھی ٹوپی اور اجرک سے گہری عقیدت اور جزباتی لگاؤ رکھتے ہیں اور یوم ثقافت پر پہنے کے مختلف رنگوں اور دیدہ زیب ڈیزائن کی نت نئ ٹوپیاں اور اجرک خرید رہے ہیں۔

ٹوپیاں اور اجرک اندرون سندھ کے مختلف علاقوں میں تیار کی جاتی ہیں اور ہر علاقے کا اپنا الگ اندازہے لیکن ہر ٹوپی پر سامنے کی طرف محراب بنا ہوتا ہے۔ ٹوپیوں پر مختلف اقسام کی کڑہائی اور شیشہ کا کام کیا جاتاہے جب کہ اجرکوں پر روایتی بلاک پرنٹنگ کے ساتھ جدید انداز بھی اپنائے جارہے ہیں۔ وقت کے ساتھ ان کی قیمت مین بھی اضافہ ہو گیا ہے۔

پاکستان کے ہر صوبے کی اپنی علیحدہ ثقافت اور شناخت ہے۔ ضرورت اس امر کی ہے ملک کے تمام قومیتوں کو ایک دوسرے کی ثقافتی اقدار اور دیگر علامات کا احترام کرنا چاہئے اور بغیر کسی تعصب کے سارے صوبوں کی ثقافت کا دن منانا چاہئے۔ سماء

اور

کی

پر

Shahid Afridi

mecca

pandemic

norway

Tabool ads will show in this div