سینیٹرمشاہد حسین کی اوباما کے خصوصی مشیر کی ملاقات

Oct 08, 2016
[video width="640" height="360" mp4="http://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2016/10/MUSHAHID-HUSSAIN-USA-08-10.mp4"][/video] MUSHAHID HUSSAIN USA 08-10 واشنگٹن : سینیٹر مشاہد حسین سید نے امریکی صدر براک اوباما کے خصوصی مشیر پیٹر لیوائے سے ملاقات کی، ملاقات میں کشمیر کے دیرینہ تنازع کے حل میں امریکی مدد پر زور دیا گیا۔ جموں و کشمیرکے بارے میں وزیراعظم کے خصوصی نمائندے سینیٹر مشاہد حسین سید نے امریکا پر زور دیا ہے کہ وہ کشمیر کے دیرینہ تنازع کے حل میں مدد دے، جس سے عالمی امن کو خطرہ لاحق ہوسکتاہے،عالمی برادری کی جانب سے مقبوضہ جموں کشمیر میں بھارتی ناانصافیوں اورمظالم پر آنکھیں بند کرنے سے خطے کے امن کو شدید خطرات لاحق ہو سکتے ہیں۔ انہوں نے پیٹرلیوائے کو بھارتی ظلم وستم کی وجہ سے مقبوضہ وادی میں سلامتی کی بگڑتی ہوئی صورت حال کے بارے میں بتایا، اس موقع پر مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ظلم وستم کے دستاویزی ثبوت بھی امریکی مشیر کے حوالے کئے گئے۔ وزیراعظم کے خصوصی نمائندوں نے امریکی صدر کے خصوصی مشیر کو مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بگڑتی ہوئی صورت حال سے آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اوربھارت کے درمیان کشیدگی دہشت گردی کے خلاف جنگ پراثر انداز ہوسکتی ہے، کشمیر کا تنازعہ حل کئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا قیام ممکن نہیں۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے امریکا پر زور دیا کہ وہ کشمیر کے دیرینہ تنازع کے حل میں مدد دے، جس سے عالمی امن کو خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔ سماء

US delegation

Mushahid Hussain

Tabool ads will show in this div