اسلام آبادہائی سیکیورٹی زون کاقیام،آرڈیننس کامسودہ تیار

اسٹاف رپورٹ


اسلام آباد  :  اسلام آباد میں ہائی سیکیورٹی زون کے قیام کے آرڈیننس کا مسودہ تیار کرلیا گیا ہے، ریڈزون میں دھرنوں اور احتجاج پر پابندی کی سفارش، خلاف ورزی پر دس سال قید کی سزا تجویز کر دی گئی۔

مسودے کے مطابق پارلیمنٹ ہاؤس، وزیراعظم ہاؤس اور آفس، ایوان صدر، سپریم کورٹ، وفاقی شرعی عدالت، ڈپلومیٹک انکلیو، ایف بی آر، ڈی چوک اور پریڈ ایونیو ہائی سیکیورٹی زون کا حصہ ہوں گے۔

چیف کمشنر کسی بھی علاقے کو ہائی سیکیورٹی زون قرار دینے کے مجاز ہوں گے، مسودے کے مطابق، کسی کو بھی ہائی سیکیورٹی زون میں احتجاج، بچوں اور خواتین کو شیلڈ بنا کر دھرنے کی اجازت نہیں ہوگی۔ غیر متعلقہ شخص سیکیورٹی زون میں داخل نہیں ہو سکے گا۔

کسی عمارت کو نقصان پہنچانے، ڈنڈا لانے یا چار سے زیادہ افراد کے اجتماع پر پابندی ہوگی۔ آرڈیننس میں خلاف ورزی پر دس سال قید کی سزا تجویز کی گئی ہے۔ سماء

privatization

transparency

Tabool ads will show in this div