پی ٹی آئی ارکان کا استعفوں کی مشترکہ تصدیق پر اصرار، اسپیکر پنجاب اسمبلی کا انکار

اسٹاف رپورٹ

لاہور : قومی اسمبلی کی طرح تحریک انصاف کے استعفوں کا معاملہ پنجاب اسمبلی میں بھی التواء کا شکار ہوگیا، کپتان کے کھلاڑیوں نے مشترکہ تصدیق پر اصرار کیا اور اسپیکر نے انفرادی تصدیق تک استعفیٰ منظور کرنے سے انکار کردیا۔

کپتان کے کھلاڑی استعفوں کی مشترکہ تصدیق کے مطالبے پر قائم ہیں، اسپیکر پنجاب اسمبلی بھی انفرادی تصدیق کے مؤقف پر ڈٹ گئے۔

تحریک انصاف کے 29 ارکان میاں محمود الرشید کی قیادت میں پنجاب اسمبلی پہنچے اور تقریباً 2 گھنٹے کانفرنس روم میں بیٹھے اسپیکر کا انتظار کرتے رہے، ڈپٹی اسپیکر اور رانا ثناء اللہ نے پی ٹی آئی کے ارکان کو علیحدہ علیحدہ پیش ہونے کیلئے آمادہ کرنے کی کوشش کی لیکن اپوزیشن نے ان کی ایک نہ سنی۔

اسپیکر کو دی گئی ڈیڈ لائن ختم ہونے پر پی ٹی آئی کے ارکان نے اسبملی کے احاطے میں آکر مورچہ لگالیا اور حکومت کیخلاف نعرے بازی کی، میاں محمود الرشید کہتے ہيں کہ ارکان کو علیحدہ علیحدہ بلا کر ن لیگ والے وفاداریاں خریدنا چاہتے ہیں۔

پنجاب اسمبلی میں تحریک انصاف کے 30 ارکان ہیں جن میں سے 29 نے استعفیٰ جمع کروا رکھا ہے جبکہ حافظ آباد سے منتخب ہونیوالی ایم پی اے نگہت انتصار بھٹی نے پارٹی فیصلے سے بغاوت کرتے ہوئے استعفیٰ نہیں دیا۔ سماء

Musharraf

street

Tabool ads will show in this div