دو تہائی اکثریت دے دو نظام بدل دوں گا، علامہ طاہر القادری کا اعلان

ویب ایڈیٹر

بھکر : ڈاکٹر طاہر القادری کہتے ہیں کہ غریبوں کی جنگ اس لئے لڑ رہا ہوں تاکہ خدا راضی ہوجائے، پاکستان میں کمزور اور طاقتور کی جنگ شروع ہوچکی ہے، غریبوں کی جنگ لڑ رہا ہوں، دو تہائی اکثریت دے دو نظام بدل دوں گا، ملک سے فرقہ واریت اور دہشت گردی ختم کردیں گے، سنی و شیعہ کو ایک ملت بنا کر دکھاؤں گا، 29 نومبر کو دریا خان کا صوبائی الیکشن پہلا امتحان ہے، سیاسی جدوجہد شروع کردی، بھکر والے اپنا حق حاصل کرنے کیلئے نذر عباس کو ووٹ دیں۔

بھکر میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر علامہ طاہر القادری نے کہا کہ دھرنے نے پاکستان کے کروڑوں لوگوں کو بیدار کردیا،  غریب دشمن اور کرپٹ حکمرانوں کو للکار رہے ہیں، ضمنی الیکشن سے سیاسی جنگ کا آغاز کررہے ہیں، 29 نومبر کو نذر عباس کو ووٹ دیکر تحریک میں شامل ہوں، اپنا ووٹ دیتے وقت میرا چہرہ یاد رکھنا، یہ پہلا امتحان ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ غریبوں کی جنگ اس لئے لڑ رہا ہوں تاکہ خدا راضی ہوجائے، پاکستان میں کمزور اور طاقتور کی جنگ شروع ہوچکی ہے، ہر پیغمبر نے انقلاب کی دعوت دی، حکمران محلات میں رہتے ہیں اور غریب کے پاس چھت نہیں، بھکر والو! اٹھو اپنا حق چھین لو۔

طاہر القادری کہتے ہیں کہ قوم ہمیں دو تہائی اکثریت دے نظام بدل دوں گا، خواتین کیخلاف امتیازی سلوک کا خاتمہ کریں گے، ملک سے انتہاء پسندی، فرقہ واریت کو ختم کرینگے، سنی شعیہ کو ایک ملت بناکر دکھاؤں گا، جنگ سنی شیعہ کی نہیں، کمزور اور طاقتور کی ہے، تمام مسلمانوں کو پھر سے بھائی بھائی بنائیں گے۔

پی اے ٹی سربراہ کا کہنا ہے کہ بھکر کے لوگ آج بھی جانوروں کو پانی پلانے کو ترس رہے ہیں، زراعت کو معیشت کی ریڑھ کی ہڈی بناکر دکھائیں گے، لاہور کے ہر شہری پر سالانہ 35 ہزار روپے خرچ ہورہے ہیں، چھوٹے شہروں لاہور ہو یا بھکر، وسائل سب کو برابر ملنے چاہئیں، وڈیروں کے تسلط سے عوام کو آزاد کراؤں گا۔ سماء

Clifton

shortage

azarenka

Tabool ads will show in this div