عامر لیاقت نے مصطفیٰ کمال سمیت تمام مخالفین سے معافی مانگ لی

AMIR LIAQUT FUNNY NAT 23-08

کراچی : ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے مصطفیٰ کمال سمیت تمام مخالفین سے مانگ لی، کہتے ہیں متحدہ قائد محب وطن نہیں ہوسکتے، قتل کی دھمکیاں دینے والوں سے کہتا ہوں کہ دھمکیاں نہ دیں آکر میرے سینے پر گولی ماریں، یقیناً پاکستان کے پرچم میں ہی دفن ہونا پسند کروں گا، میرا لہو اتنا سستا نہیں کہ رنگ نہ لائے، قاتل بے نقاب ہوں گے، وفاقی حکومت الطاف حسین کیخلاف کچھ نہیں کرے گی۔

سماء کے پروگرام  آواز میں اینکر شہزاد اقبال سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے کہا کہ میں نے ایم کیو ایم کی ساکھ بچانے کی کوشش کی، مجھے کسی عہدے کی لالچ نہیں ہے، جب رینجرز حراست سے واپس آیا تو پتہ چلا لاتعلقی کا اعلان ہورہا ہے، فاروق ستار کو الطاف حسین سے لاتعلقی کے اعلان کا مشورہ دیا، 3 مہینوں میں دیکھا ایم کیو ایم الطاف حسین سے علیحدہ نہیں ہوسکتی، یہ پاناما لیکس پر سے توجہ ہٹانے کا کھیل ہے، کراچی میں کوئی فیصلے نہیں ہوں گے چند دن میں سب کھل کر سامنے آجائے گا۔

ان کا کہنا ہے کہ الطاف حسین نے معافی مانگی اگلے دن پھر بیان آگیا، واسع جلیل نے کہا کہ وہ الطاف حسین کے بیان پر قائم ہیں، فون کرکے کہا گہا تمہیں پاکستانی پرچم سے بہت محبت ہے اسی میں دفن ہونا، میں کہتا ہوں یقیناً پاکستانی پرچم میں ہی دفن ہوؤں گا، فون کرنیوالوں کی آوازیں جانی پہچانی ہیں، ان کا سو فیصد تعلق ایم کیو ایم سے ہے، اگر میں قتل ہوا تو ذمہ دار الطاف حسین ہوں گے، فون مت کرو، ہمت ہے تو سینے پر گولی مارو۔

مزید جانیے : قتل ہوا تو ذمہ دار الطاف حسین ہونگے، عامر لیاقت حسین

راؤ انوار کی جانب سے گرفتاری کے سوال پر ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے کہا کہ میں سہولت کار نہیں ہوں، میرا دہشت گردانہ کارروائیوں سے کوئی تعلق نہیں، جو گرفتار کرنا چاہتا ہے کرلے، ابھی سماء پر ہوں، پھر جیو جاؤں گا اور اس کے بعد اپنے دفتر اور گھر، جہاں چاہیں آجائیں، عامر لیاقت کا لہو اتنا سستا نہیں کہ کوئی بے نقاب نہیں ہوگا۔

ایم کیو ایم کے سابق رہنماء اور مذہبی اسکالر نے پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ مصطفیٰ کمال سے مخالفت پر معافی مانگ لی، کہتے ہیں ثابت ہوگیا مصطفیٰ کمال جو کہہ رہے ہیں وہ ٹھیک ہے، پی ایس پی یا کسی اور جماعت میں جانے کا ارادہ نہیں، الطاف حسین ہرگز محب وطن نہیں ہوسکتے، چوہدری نثار نے متحدہ قائد کیخلاف کارروائی کی 8 ویں بار بات کی، متحدہ قائد کیخلاف ریاست کچھ نہیں کرے گی، اچکزئی صاحب اور فضل الرحمان نے تقریر کی، گرفتاری ہوئی؟۔

انہوں نے مزید کہا کہ 22 اگست کا کیس کراچی میں اکیلے لڑا، الطاف حسین کا جانشین تو میں کبھی نہیں بنتا، متحدہ قائد کی ذہنی طبعیت خراب تھی، ہاں میں ہاں ملاتا رہتا تھا، ذہنی کیفیت کی بات ایک دو بار ہو تو مانی جاسکتی ہے، پرچم جل رہا ہے، اسرائیل اور بھارت سے مدد مانگی جارہی ہے۔ سماء

Dr Amir Liaquat Hussain

Death Threat

Tabool ads will show in this div