وسائل کی منصفانہ تقسیم کے بغیر ہم ترقی نہیں کر سکتے

Siraj Ul Haq Shujaat Lhr Pkg 23-05 اسلام آباد : جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق کا کہنا ہے کہ لوگوں کو انصاف خریدنا پڑتا ہے جو سراسر زیادتی ہے، وسائل کی غیر منصفانہ تقسیم سے ترقی نہیں ہوسکتی ان کا کہنا تھا کہ قانون کی بالادستی تک ملک ترقی نہیں کرسکتا۔ جمعہ کو ایوان بالا کے اجلاس میں سینیٹ کے44ویں یوم تاسیس سینٹ کے کردار اور اختیارات پر بحث میں حصہ لیتے ہوئے سینیٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ ملک میں ایسا نظام بنانا چاہیے کہ تمام شہریوں کو ترقی کے مساوی مواقع ملیں، آئین کے تحت ریاست تعلیم، صحت اور دوسری سہولیات فراہم کرنے کی پابند ہے، وسائل کی منصفانہ تقسیم کے بغیر ہم ترقی نہیں کر سکتے۔ سراج الحق کا کہنا تھا کہ آج کا دن ہمارے لئے بہت تاریخی ہے، آئین کے بننے کے بعد 44 سال گزر چکے ہیں، لیکن پاکستان میں غیر یقینی صورت حال ختم نہیں ہوئی، ملک کو خوف کی فضا سے نکالنے کے لئے سینیٹ کو کردار ادا کرنا چاہیے، سینیٹ ایک باوقار ادارہ ہے، اس میں تمام صوبوں کی مساوی نمائندگی ہے لیکن ملک کو ایسے نظام کی ضرورت ہے کہ تمام شہری بھی برابر ہو جائیں۔ ملک میں42 لاکھ بچوں کو تعلیم کے لئے بنیادی سہولیات میسر نہیں ہیں جبکہ چند لاکھ بچے اعلیٰ تعلیم حاصل کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں ہمیں ایسا نظام بنانا چاہیے کہ تمام شہریوں کو ترقی کے مساوی مواقع ملیں۔ آئین کے تحت ریاست تعلیم‘ صحت اور دوسری سہولیات فراہم کرنے کی پابند ہے لیکن ہمارے ہسپتال اور تعلیمی ادارے بھی دولت کی بنیاد پر تقسیم ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ امیر اور غریب میں فرق ختم کئے بغیر ملک ترقی نہیں کر سکتا۔ ہماری آج کی آزادی لاکھوں انسانوں کی قربانیوں کا نتیجہ ہے، قانون کی حکمرانی قائم ہوگی تو ملک ترقی کرے گا۔ سماء

SENATE

SIRAJ UL HAQ

JAMAT E ISLAMI

law and justice

Tabool ads will show in this div