کراچی میں بجلی کا بحران انتہائی سنگین شکل اختیار کرگیا

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ
کراچی: کراچی میں بجلی کا بحران انتہائی سنگین شکل اختیار کرگیا ہے کیونکہ کے ای ایس سی انتظامیہ اور یونین کی لڑائی ختم ہونے کا نام نہیں لے رہی ۔۔۔ صورتحال اتنی خراب ہے کہ شہریوں کے رات دن گھروں سے باہر گزرنے لگے ہیں ۔ اگر کہیں فالٹ پیدا ہو جائے تو ٹھیک کرنے والا بھی کوئی نہیں ہوتا کے ای ایس سی انتظامیہ صاف الفاظ میں کہہ چکی ہے کہ اب کوئی خرابی ٹھیک نہیں کی جائے گی۔


ڈیڑھ کروڑ کی آبادی والے شہر کے مکین کئی ماہ سے بجلی کے بدترین بحران کا شکار ہیں نہ تو بجلی کے جانے کا وقت ہے اور نہ ہی آنے کا،، اور ایسے میں اگر کوئی خرابی پیدا ہو جائے تو بس دعا کے سوا کوئی اور راستہ نہیں۔ کے ای ایس سی کے شکایتی مراکز تو عرصہ دراز سے بند تھے، اب تو فون تک اٹینڈ نہیں کئے جاتے۔ صدر اور گورنر سمیت اعلیٰ حکام احکامات دیتے دیتے تھک گئے لیکن کے ای ایس سی انتظامیہ کے بہرے پن کا کوئی علاج نہ کر سکا ۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ پہلے تو یہ عذاب صرف دن میں مسلط رہتا تھا اب تو رات بھی جاگ کر گزارنا پڑی ہے،، لانڈھی، ملیر، سول لائن، ،الہلال سوسائٹی، نارتھ ناظم آباد ،پاپوش نگر،لیاقت آباد اور شاہ فیصل کالونی سمیت کئی علاقوں میں رات بھر بجلی نہیں تھی اور شہری سو تک نہیں سکے۔

عام شہریوں کے ساتھ کاروباری طبقہ بھی بجلی کی طویل بندش کا رونا رو رہا ہے،، اور تاجروں کا کہنا ہے کہ کاروبار ختم ہو کر رہ گیا ہے۔

چند ماہ کے دوران شہر قائد کے باسی اپنے قیمتی الیکٹرانک آلات سے محروم ہو چکے ہیں لیکن کوئی ادارہ ایسا نہیں جو ان کے نقصآنات کا ازالہ کر سکے۔ عوام نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ خدارا اس بحران کا جلد حل نکالا جائے تاکہ وہ سکھ کا سانس لے سکیں۔ سماء نیوز

میں

کا

burger

پشاور

Long march

Tabool ads will show in this div