سانحہ اےپی ایس،ماسٹرمائنڈعمرمنصورکی ہلاکت کی تصدیق

080228-F-0528C-004 پشاور : آرمی پبلک اسکول کے 144بچوں کا قاتل کالعدم طالبان کا سرکردہ دہشتگرد عمر منصور نرے اپنے انجام کو پہنچ گیا ہے، سیکیورٹی حکام نے عمرمنصور کی ہلاکت کی تصدیق کردی ہے۔ سانحہ آرمی پبلک اسکول کا ماسٹرمائنڈ کی ہلاکت کی اطلاعات دو دن سے زیر گردش تھیں، تاہم اب سیکیورٹی حکام نے بھی تصدیق کی ہے کہ عمر منصور میزائل حملے میں ہلاک ہوچکا ہے۔ طالبان جنگجو کو گزشتہ روز افغان صوبہ ننگرہار کے علاقے چینہ بندر میں میزائل حملے میں نشانہ بناگیا۔ سیکیورٹی ذرائع کے مطابق حملے میں عمر منصور کا قریبی ساتھی قاری سیف اللہ کے بھی مارے جانے کی اطلاعات ہیں، تاہم کسی ذرائع سے اس کی ہلاکت کے بارے میں حتمی طور پر کچھ نہیں کہا گیا۔ 1009963-ArmyPublicSchoolAFP-1450155506-674-640x480 دوسری جانب طالبان ذرائع نے بھی عمر منصور کی ہلاکت پر کسی تبصرہ سے گریز کیا ہے، عمر منصور کا شمار کالعدم طالبان کے تین اہم ترین جنگجو میں ہوتا تھا، جس کی ہلاکت سے طالبان کو شدید دھچکا لگا۔ عمر منصور عرف نرے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے گیڈر گروپ (گیدر گروپ) کا غیر اعلانیہ آپریشنل سربراہ تھا، عمر منصور حکومت سے مذاکرات کا شدید مخالف تھا، وہ بہت سخت مزاج اور حکومت سے مذاکرات کیلئے لچک دکھانے والے کئی جنگجو سے قطع تعلق کرچکا تھا، عمر منصور کو چارسدہ کی باچا خان یونیورسٹی پر حملے کا ماسٹر مائنڈ بھی قرار دیا جاتا ہے، جس میں اکیس افراد جاں بحق ہوئے۔

TTP Gidar group

Umar Mansoor

US drone attack

Bannu Jail

Qari Saifullah

Tabool ads will show in this div