ترکیہ،شام زلزلہ: نامعلوم پاکستانی نے 30 ملین ڈالر کا عطیہ دیدیا

30ملین ڈالردینے والے تاجرنے اپنا نام تک نہیں بتایا

ترکیہ ( Turkiye) اور شام ( Syria ) میں آئے ہولناک زلزلے ( Earthquake ) کے متاثرین کی مدد کیلئے نامعلوم پاکستانی نے 30 ملین امریکی ڈالر عطیہ کرکے سب کو حیران کردیا۔

پاکستانیوں کی فراخ دلی پر ہر کوئی عش عش کر اٹھا ہے۔ موصول اطلاعات کے مطابق متعلقہ شخص پاکستانی تاجر ہے جس نے خاموشی سے متاثرین کیلئے عطیہ کیا۔

نامعلوم پاکستانی تاجر نے امریکا میں موجود ترک سفارت خانے میں تیس ملین ڈالر کی خطیر رقم عطیہ کی اور چلا گیا۔ اتنی بڑی رقم دینے والے تاجر نے اپنا نام تک نہیں بتایا۔

رپورٹ کے مطابق دنیا میں عطیہ کرنے والے ممالک میں پاکستان (عالمی سطح پر 34ویں نمبر پر) ہے۔

پاکستان سینٹر فار فلانتھراپی کی طرف سے کی گئی تحقیق سے پتا چلتا ہے کہ پاکستانی تقریباً PKR 240 بلین (2 بلین ڈالر سے زائد) سالانہ خیراتی اداروں کو دیتے ہیں۔

خبر سامنے آنے پر وزیراعظم پاکستان کی جانب سے بھی اس دریا دلی اور عطیہ پر نامعلوم پاکستان کو خراج تحسین پیش کیا ہے۔

مائیکرو بلاگنگ سائٹ پر اپنے بیان میں وزیراعظم نے لکھا کہ ايک گمنام پاکستانی کی انسان دوستی ديکھ کر دل بہت متاثر ہوا، گمنام شخص نے ترکيہ اور شام کے زلزلہ متاثرين کيلئے 30 ملين ڈالر کا عطيہ ديا۔

وزيراعظم نے یہ بھی لکھا کہ گمنام پاکستانی نے امريکا ميں پاکستانی سفارت خانے ميں جا کر پيسے عطيہ کيئے، يہ انسان دوستی کی شاندار مثال ہے۔

TURKEY EARTHQUAKE

TURKIYE SYRIA QUAKE

ANONYMOUS PAKISTANI

ANONYMOUS BUSINESSMAN

AID FOR EARTHQUAKE EFFECTEES

تبولا

Tabool ads will show in this div

تبولا

Tabool ads will show in this div