گائے کا ذبیحہ روک دیا جائے تو… بھارتی جج نے سب کو چکرا کر رکھ دیا

گائے کی غیر قانونی نقل و حمل کے جرم میں ایک شخص کو عمر قید اور 5 لاکھ روپے جرمانہ

بھارتی عدالت نے گائیوں کی غیر قانونی نقل و حمل سے متعلق کیس میں اتنے عجیب و غریب ریمارکس دیے ہیں جس نے ہر شخص کو چکرا کر رکھ دیا ہے۔

بھارتی ریاست گجرات میں ضلعی عدالت نے ایک شخص کو گائے کی غیر قانونی نقل و حمل کے جرم میں عمر قید اور 5 لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنادی۔

جج سمیر ونود چندر ویاس نے حکم جاری کرتے ہوئے کہا کہ ”اگر گائے کا ذبیحہ روک دیا جائے تو دنیا کے تمام مسائل حل ہو جائیں گے“۔

بھارتی جج نے دعویٰ کیا کہ ”سائنس نے اس بات کو ثابت کیا ہے کہ گائے کے گوبر سے بنے گھر جوہری تابکاری سے متاثر نہیں ہوتے اور گائے کے پیشاب میں کئی لاعلاج بیماریوں کیلئے شفا ہے“۔

واضح رہے کہ بھارتی جج کے اس دعوے کی کوئی سائنسی بنیاد نہیں ہے۔

بھارتی عدالت کے جج کا مزید کہنا تھا کہ ”گائے نہ صرف ایک جانور ہے بلکہ ایک ماں ہے۔ گائے 68 کروڑ مقدس مقامات اور 33 کروڑ دیوتاؤں کی ایک زندہ تصویر ہے۔ پوری کائنات کیلئے گائے کی اہمیت کو الفاظ میں بیان نہیں کیا جاسکتا“۔

عدالت نے اپنے ریمارکس میں مزید کہا کہ ”گائے کو ناراض رکھنے سے ہماری دولت اور جائیداد غائب ہو جاتی ہے“۔

جج نے گائے کے ذبیحہ کو موسمیاتی تبدیلی سے بھی جوڑا اور کہا کہ ”آج دنیا میں گلوبل وارمنگ جیسے مسائل میں اضافہ کی واحد وجہ گائے کا ذبیحہ ہے۔ جب تک گائے کا ذبیحہ مکمل طور پر بند نہیں ہوتا ہم ان چیلنجز پر قابو نہیں پاسکتے“۔

واضح رہے کہ بھارتی عدالت نے یہ ریمارکس 16 سے زیادہ گائیوں کی غیر قانونی نقل و حمل سے متعلق کیس میں دیے ہیں جس میں ملوث شخص کو گزشتہ سال اگست میں گرفتار کیا گیا تھا۔ ملزم کو عمر قید کی سزا کے علاوہ پانچ لاکھ روپے جرمانہ بھی عائد کیا گیا ہے۔

cow slaughter

Gujarat Court

Indian judge

Uzir Jan 25, 2023 09:51pm
Jub gaye matah borhi ya zakhmi ho jaye to road pe phenk daity hain ye inki devi mata ha
Tabool ads will show in this div