بھارت میں دو کلومیٹر سڑک چوری کرلی گئی

سڑک کی جگہ پر گیہوں بودیے گئے

آپ نے سڑک سے بلب یا پودوں کی چوری کا تو سنا ہوگا لیکن کیا آپ نے سنا ہے کہ کہیں پر سڑک ہی چوری کرلی گئی ہو؟۔

یقیناً آپ حیران ہورہے ہوں گے لیکن بھارتی صوبے بہار کے ایک گاؤں میں حقیقت میں دو کلومیٹر سڑک چوری ہونے کا واقعہ پیش آیا ہے، مبینہ چور چند دن قبل ایک موبائل ٹاور، گزشتہ ماہ کے اوائل میں ریل انجن اور اس سے قبل ایک پل پر اپنا ہاتھ صاف کرچکے ہیں۔

یہ واقعہ بہار کے ضلع بنکا کے ایک گاؤں کھرونی میں پیش آیا، لوگ گزشتہ روز جب صبح کو اپنے گھروں سے باہر نکلے تو یہ دیکھ کر حیرت زدہ رہ گئے کہ گاؤں سے ہو کر گزرنے والی تقریباً دو کلومیٹر طویل سڑک کا کوئی پتہ ہی نہیں ہے اور جہاں کبھی سڑک ہوتی تھی وہاں گیہوں کے بیج بو دیے گئے ہیں۔

لوگ پہلے سمجھے کہ وہ کوئی خواب دیکھ رہے ہیں لیکن جلد ہی انہیں حقیقت کا ادراک ہوگیا کہ کھرونی گاؤں کو خادم پور گاؤں سے ملانے والی سڑک تو چوری ہوچکی ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کھیرونی گاوں کے مبینہ ’چوروں‘ نے کولتار سے بنی پختہ سڑک کو پہلے اکھاڑ دیا اور پھر اس پر ٹریکٹر چلا کر اس پر اور اس کے اطرف کے کھیتوں میں گیہوں بو دیے۔ جب خادم پور گاؤں کے لوگوں نے اس پر اعتراض کیا تو مبینہ چور مرنے مارنے پر اتر آئے۔

اس واقعے کے بعد گاؤں اور آس پاس کے علاقے کے لوگ شدید غم و غصے میں ہیں کیونکہ انہیں نقل و حمل میں کافی پریشانی پیش آرہی ہے۔ لوگوں کو مین روڈ تک پہنچنے کے لیے پگڈنڈیوں کے راستے پیدل ہی جانا پڑ رہا ہے۔

دہیاتیوں نے متعلقہ سرکاری حکام سے اس کی شکایت کی ہے۔ جنہوں نے صورت حال کا جائزہ لینے اور قصورواروں کے خلاف مناسب کارروائی کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔

مقامی صحافی کے مطابق دراصل کسانوں نے سڑک تعمیر کرنے کے لیے حکومت کو زمین دی تھی لیکن انہیں حسب وعدہ اس کا معاوضہ نہیں ملا، اس لیے ناراض کسانوں نے سڑک اکھاڑ دی اور اس پر گیہوں بو دیے۔

Road stolen in Bihar

Tabool ads will show in this div