کراچی میں کورولا کاریں چوروں کا پسندیدہ ہدف

دس ماہ کے دوران 1 ہزار 899 گاڑیاں چرائی یا چھینی گئیں، رپورٹ

کراچی میں دس ماہ کے دوران 1 ہزار 899 گاڑیاں چرائی یا چھینی گئیں۔

کراچی میں کورولا کاریں کار چورگینگز کا آسان اور پسندیدہ ہدف بن گئی ہیں، اور سی پی ایل سی کے اعدا دو شمارکے مطابق شہر میں صرف 10 ماہ کے دوران ایک ہزار 899 گاڑیاں چرائی یا چھینی گئیں۔

سی پی ایل سی کی رپورٹ کے مطابق ہاتھوں ہاتھ بک جانے کےباعث یہ گاڑیاں کار چور گینگ کا ہدف ہوتی ہیں کار چور ایک ہی کمپنی کی 2003 سے 2013 تک کے ماڈل کی گاڑیاں چرانے کو ترجیح دیتا ہے۔

سی پی ایل سی کے اعداد و شمار کے مطابق رواں سال کے 10 ماہ میں 1899 چوری یا چھینی گئی گاڑیوں میں سے حیران کن طو پر 36 فیصد ایک ہی کمپنی کورولا کی تھیں، اور یہ تعداد 675 بنتی ہے، ان میں سے 33 گاڑیاں چھینی اور 642 گاڑیاں چرائی گئی ہیں۔

کراچی پولیس نے دس ماہ کے دوران چرائی گئی ایک کمپنی کی 94 گاڑیاں برآمد کرلیں ہیں اوردعویٰ کیا ہے کہ گاڑیاں برآمد کرنے کا تناسب 20 فیصد ہے۔

ایس ایس پی اے وی ایل سی انور کھیتران نے ٹریکر نہ لگوانے والے شہریوں کو گاڑی ٹریک کرنے کا سستا نسخہ بتا دیا ہے، اور گاڑی خریدنے سے پہلے اچھی طرح چھان بین کا مشورہ دیا ہے، اور کہا ہے کہ پولیس کاروں کی برآمدگی کیلئے کوشش کررہی ہے ۔

کارچوری کی بڑھتی ہوئی وارداتوں کے خلاف متاثرہ شہریوں نے کراچی پریس کلب پر احتجاج بھی کیا تھا۔

CAR LIFTER

Tabool ads will show in this div