فلسطینیوں سے یکجہتی کے عالمی دن پر بھی اسرائیلی دہشت گردی نہ تھم سکی، 4 نوجوان شہید

شہداء میں دو سگے بھائی بھی شامل

فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کے عالمی دن پر اسرائیلی فورسز کی فائرنگ سے دو بھائیوں سمیت 4 فلسطینی شہید ہوگئے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی فورسز نے رام اللہ میں سرچ آپریشن کے دوران فائرنگ کرکے دو سگے بھائیوں کو شہید کردیا۔ دونوں بھائیوں کی شناخت جواد اور داففر ریوامی کے ناموں سے کی گئی جن کی عمریں 21 اور 22 برس ہیں۔

فلسطینی وزارت صحت کے مطابق ایک علیحدہ واقعے میں موفد الخلیل کو الخلیل شہر میں فائرنگ کرکے شہید کیا جبکہ دیگر 8 افراد زخمی بھی ہوئے۔

اس سے قبل منگل کو اسرائیلی ایمرجنسی سروسز نے ایک بیان میں بتایا تھا کہ مقبوجہ بیت المقدس کے قریب اسرائیلی فورسز پر مبینہ حملے کے دوران اسرائیلی فورسز کی فائرنگ سے ایک نوجوان شہید ہوا ہے جس کی شناخت سامنے نہیں آئی۔

دوسری جانب منگل کو دنیا بھر میں فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کا دن منایا گیا۔ یہ دن منانے کا مقصد فلسطینی عوام کی قربانیوں کو یاد کرنا اور مسئلہ فلسطین کو دنیا کے سامنے اجاگر کرنا ہے۔

تقریبا 75 سال گزرچکے ہیں مگر فلسطین پر اسرائیلی جارحیت میں کمی نہیں آئی، ہزاروں فلسطینی وطن کی خاطر جام شہادت نوش کرچکے ہیں۔ 7 لاکھ سے زائد بے گھر فلسطینی آج بھی اپنے گھروں کی از سر نو تعمیر کے منتظر ہیں۔

فلسطین نے اقوام متحدہ کے رکن ممالک سے جنرل اسمبلی میں اسرائیلی دہشت گردی کے خلاف آواز اٹھانے کا مطالبہ کیا ہے۔

یاد رہے کہ 1977ء میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے فلسطینی عوام سے اظہار یکجہتی کا دن منانے کی باقاعدہ طورپرمنظوری دی تھی۔ نیویارک، جنیوا اور ویانا میں یو این ہیڈ کوارٹرز میں اس دن کی مناسبت سے خصوصی تقاریب کا اہتمام بھی کیا جاتا ہے۔

Israel

OCCUPIED PALESTINE

PALESTINIAN KILLED

occupied west bank

Tabool ads will show in this div