تحریک انصاف کے ایم این ایز کے استعفی منظور کرنے کی حکمت عملی تیار

اتحادیوں کی اسپيکر سے مرضی کی سیٹوں پر استعفے منظور کرنے کی سفارش

ضمنی انتخابات کے نتائج کی روشنی میں حکومتی اتحاد نے اپنی پالیسی میں رد و بدل کر لیا۔

حکومتی اتحاد نے تحريک انصاف کے 30 سے 35 ارکان قومی اسمبلی کے استعفے منظور کرنے کی حکمت عملی تیار کر لی۔ تحریک انصاف کے استعفوں کی منظوری سے متعلق نئی حکمت عملی اپنا لی گئی۔

اتحادیوں نے اسپيکر سے مرضی کی سیٹوں پر استعفے منظور کرنے کی فرمائشیں کرديں۔ مسلم لیگ ن جی ٹی روڈ سے ملحقہ حلقوں میں استعفوں کی منظوری کی خواہشمند ہے جبکہ جے یو آئی بنوں، کرک، ڈیرہ اسماعیل خان، باجوڑ کے حلقوں پر استعفوں کی منظوری کيلئے زور دے رہی ہے۔

دوسری جانب عوام نیشنل پارٹی (اے این پی) خیبرپختونخوا کے مرکزی اضلاع میں پی ٹی آئی کے استعفوں کی منظوری کی خواہاں ہے۔

حکومتی اتحاد نے تحريک انصاف کے 30 سے 35 ارکان قومی اسمبلی کے استعفے منظور کرنے کی حکمت عملی تیار کر لی تاہم قائدین کی ہدایت پر اسپیکر نے مزید استعفوں پر کام روک دیا۔

PTI

NATIONAL ASSEMBLY

PDM

Tabool ads will show in this div