آرمی چیف اور چئیرمین جوائنٹ اسٹاف کمیٹی کے نام منظوری کیلئے صدر کو کل بھیجے جائیں گے

تقرری پر وزیراعظم کی مشاورت کا عمل تقریبا مکمل ہوچکا، ذرائع

نئے آرمی چیف اور چئیرمین جوائنٹ اسٹاف کمیٹی کا نام منظوری کیلیے کل صدر کوبھیجا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق نئے آرمی چیف اور چئیرمین جوائنٹ اسٹاف کمیٹی کے ناموں کی تقرری پر وزیراعظم کی مشاورت کا عمل تقریبا مکمل ہوچکا ہے، تاہم وزیراعظم شہبازشسریف کی جانب سے آج شام اتحادیوں کو اعتماد میں لیا جائے گا۔

مزید پڑھیں؛ وزیراعظم نے معمول کی سرگرمیاں منسوخ کر دیں

ذرائع کا کہنا ہے کہ کل ایک نکاتی ایجنڈے والی وفاقی کابینہ کی میٹنگ اس پر روشنی ڈالے گی، اور وفاقی کابینہ کے اجلاس کے فورا بعد کل وزیراعظم سمری صدر کو بھیج دیں گے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اہم عسکری عہدوں پر تعیناتی کی وجہ سے وزیراعظم شہباز شريف نے معمول کی سرگرمیاں منسوخ کردی ہیں، اور حکومتی وزراء نے آج بھی اس حوالے سے وزیراعظم سے مشاورت کی ہے۔

مزید پڑھیں: تقرری کے لیے سمری وزارت دفاع سے موصول ہوگئی وزيراعظم شہباز شريف سے وزیر دفاع خواجہ آصف اور سینئر وزراء اسحاق ڈار، ایاز صادق نے ملاقات کی، جس میں پاک فوج کے سربراہ اور چیئرمین جوائنٹ چیفس کيلئے بھجوائے گئے ناموں کا جائزہ لیا گیا۔

وزیر دفاع نے پینل میں شامل افسروں کی پروفائل پر وزیراعظم شہبازشریف کو بریفنگ دی۔

ملاقات کے بعد وزیردفاع کی میڈیا سے بات

وزیراعظم سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے وزیر دفاع خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ اس تعیناتی کو پبلک ڈیبیٹ کا حصہ نہیں بننا چاہئیے، اور قیاس آرائیوں سے گریز کرنا چاہئیے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ سیاست سے قطع نظر قومی مفاد میں فیصلے ہونے چاہئے، فوج کے سربراہ کی تعیناتی میں لوز ڈلیوری افورڈ نہیں کی جاسکتی، سمری پر قانونی پراسس جاری ہے، جس ميں ایک دو دن لگ سکتے ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں خواجہ آصف نے کہا کہ مجھے اس بات کا علم نہیں کہ تقرری میرٹ پر ہوگی یا سنیارٹی پر، لیکن کل تک نام فائنل ہو جائیں گے، اتحادیوں اور کابینہ کو بھی فیصلے پر اعتماد میں لیا جائے گا۔

آرٹیکل 243 کے حوالے سے وزیردفاع نے صحافی سے کہا کہ مجھے اتنے آرٹیکلز کا نہیں پتہ، آپ نے پڑھا ہوگا آپ کو پتہ ہوگا، صدر ہو یا وزیراعظم قومی مفاد میں آئین کے تحت فیصلے کرنے چاہیئے، پہلے ایک سمری آنے والی خبروں میں کوئی صداقت نہیں، میڈیا کو سیاسی دھڑے بندیوں کی نمائندگی نہیں کرنی چاہیئے۔

اتحادی جماعتوں کا اجلاس طلب

وزیراعظم شہباز شریف نے آج شام 6 بجے اتحادی جماعتوں کا اہم اجلاس بھی طلب کررکھا ہے، جس میں آرمی چیف کی تقرری پر مشاورت ہوگی، وزیراعظم پارلیمانی رہنماوں کو اہم تقرریوں سے متعلق فیصلوں پر اعتماد میں لیں گے۔

ذرائع کے مطابق آج ہونے والے اہم اجلاس میں تحریک انصاف ( پی ٹی آئی ) کے لانگ مارچ سمیت اہم سیاسی امور پر بھی مشاورت ہوگی۔

ARMY CHIEF

ARMY CHIEF SELECTION

Tabool ads will show in this div