منی لانڈرنگ کیس میں بریت پر وزیراعظم کا رد عمل

شہباز شریف اور حمزہ شہباز پر 16 ارب روپے کی منی لانڈرنگ کا الزام تھا

وزیراعظم شہباز شریف نے منی لانڈرنگ کیس سے بری ہونے پر اسے اللہ کا فضل قرار دیا ہے۔

ایف آئی اے کے منی لانڈرنگ کیس میں بریت کے بعد وزیراعظم شہباز شریف نے ٹوئٹ کی کہ حق ذات نے پھر فضل فرمایا، منی لانڈرنگ کے جھوٹے، بے بنیاد، سیاسی انتقام پر مبنی مقدمے سے بریت کا یہ دن دکھایا، اس پر اللہ تعالیٰ کا جتنا شکر اداکریں، کم ہے۔

شہباز شریف نے کہا کہ بدترین چیرہ دستیوں، ریاستی قوت کے استعمال اور اداروں کو یرغمال بنانے کے باوجود ہم عدالت، قانون اور عوام کے سامنے سرخرو ہوئے۔

کیس کیا تھا؟

چینی اسکینڈل کیس میں شہباز شریف اور حمزہ شہباز پر 16 ارب روپے کی منی لانڈرنگ کا الزام تھا، منی لانڈنگ کیس میں شہباز شریف اور حمزہ شہباز شریف سمیت 14 ملزمان نامزد تھے۔

اس حوالے سے ایف آئی اے نے گزشتہ برس خصوصی عدالت میں چالان جمع کرایا تھا۔

ایف آئی اے کا مؤقف تھا کہ 16 ارب روپے کا شہباز شریف اور ان کے خاندان کی شوگر ملز سے کوئی تعلق نہیں تھا، یہ رقم ان کے ملازمین کے اکاؤنٹ کے ذریعے پاکستان سے باہر منتقل کی گئی۔

عمران خان اکثر شہباز شریف اور ان کے بیٹے حمزہ شہباز پر اسی کیس کی بنیاد پر منی لانڈرنگ میں ملوث ہونے کا الزام لگاتے رہے ہیں۔

money laundering case

HAMZA SHEHBAZ SHARIF

PRME MINISTER SHEHBAZ SHARIF

Tabool ads will show in this div