حامد زمان کا دو روزہ جسمانی ریمانڈ دے دیا گیا

پی ٹی آئی بانی رکن پر منی لانڈرنگ کا الزام ہے
<p>فائل فوٹو</p>

فائل فوٹو

لاہور کی ضلع کچہری نے پی ٹی آئی کے بانی رکن حامد زمان کو دو روزہ جسمانی ریمانڈ پر وفاقی تحقیقاتی ایجنسی ( ایف آئی اے ) کے حوالے کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

ایف آئی اے کی جانب سے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما کو آج ہفتہ 8 اکتوبر کو لاہور کی ضلع کچہری پیش کیا گیا۔ حامد زمان کو جوڈیشل مجسٹریٹ غلام مرتضیٰ کی عدالت میں پیش کیاگیا۔ دوران سماعت ایف آئی اے کی جانب سے حامد زمان کے 14روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی گئی۔

سماعت میں ملزم حامد زمان کی جانب سے خواجہ حارث عدالت میں پیش ہوئے اور حامد زمان کے جسمانی ریمانڈ کی مخالفت کی۔

ایف آئی اے کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن نے ممنوعہ فنڈنگ کیس کی انکوائری کی ہے اور امریکا سے بینک اکاؤنٹس کو چلایا جا رہا ہے تقریباً6کروڑ کی رقم کو لایا گیا ہے۔ ٹرسٹ کی جانب سے جو کام ہونا چاہیے تھا نہیں ہوا جو بھی رقم منگوائی گئی اسے سیاسی طور پر استعمال کیا گیا ہے اور غیر قانونی طور پر پیسے منگوائے گئے۔

جس پر حامد زمان کے وکیل نے کہا کہ ایف آئی اے نے طلبی کا نوٹس نہیں بھیجا۔

عدالت نے سوال کیا کہ ایف آئی اے کے سوالنامے کا جواب ہے آپ کے پاس؟ وکیل نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ تمام جوابات تحریری طور پر جمع کروائے گئے ہیں اور انکوائری کا دائرہ اختیار ایف آئی اے کو ہے ہی نہیں۔ ایف آئی آر میں لگائے گئے الزام بے بنیاد ہیں۔

اس موقع پر عدالت نے پی ٹی آئی کے بانی رکن حامد زمان کے ریمانڈ سے متعلق فیصلہ کچھ دیر محفوظ کرنے کے بعد انہیں 2 روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کرنے کا حکم دے دیا۔ مختصر فیصلے میں عدالت کا کہنا تھا کہ جسمانی ریمانڈ مکمل ہونے پر حامد زمان کو پیر کو دوبارہ عدالت میں پیش کیا جائے۔

پس منظر

پی ٹی آئی کے بانی رکن اور ایپٹما کے نو منتخب وائس چیئرمین حامد زمان کو جمعہ 7 اکتوبر کو لاہور سے حراست میں لیا گیا تھا۔

حامد زمان پر منی لانڈرنگ کے الزامات ہیں کہ انہوں نے انصاف ٹرسٹ کے نام سے جعلی اکاوئنٹ کھول رکھا تھا۔ ایف آئی اے ذرائع کا یہ بھی کہنا تھا کہ ملزم کے اکاوئنٹ میں چھ لاکھ پچیس ہزار ڈالرز آئے تھے، یہ ڈالرز وولٹن کرکٹ کلب سے آئے تھے۔

حامد زمان انصاف ٹرسٹ کے ٹرسٹی بھی ہیں۔ ایف آئی اے حکام کے مطابق گرفتاری وارث روڈ سے عمل میں لائی گئی۔ ملزم کے خلاف مقدمہ درج کر کے مزید تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

IMRAN KHAN

FIA CASE

HAMID ZAMAN

PTI MONEY LAUNDERING CASE

Tabool ads will show in this div