بھارتی دوا درجنوں بچوں کی موت کی وجہ بن گئی

عالمی ادارہ صحت نے الرٹ جاری کردیا

افریقی ملک گیمبیا میں بھارتی دوا 66 بچوں کی موت کی وجہ بن گئی۔

عالمی ادارہ صحت نے الرٹ جاری کیا ہے کہ جس میں کہا گیا ہے کہ افریقی ملک گیمبیا میں گردے میں زخم کی وجہ سے 66 بچوں کی موت کا تعلق ان 4 دواؤں سے ہو سکتا ہے، جو میڈن فارماسیوٹیکلز لمیٹڈ (MAIDEN PHARMACEUTICALS LTD) نامی بھارت کی دو ساز کمپنی نے کھانسی اور سردی سے بچنے کے لیے تیار کئے تھے۔

عالمی ادارہ صحت نے مزید کہا کہ ہو سکتا ہے کہ یہ دوائیں دیگر مقامات پر بھی موجود ہوں لیکن اب تک صرف گیمبیا میں ہی اان کی نشاندہی کی گئی ہے۔

ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اڈھانوم گیبریئسوس نے کہا کہ لیباٹری کے تجزیے نے کھانسی کے اس شربت میں ڈائی تھیلین گلائکول اور ایتھیلین گلائکول نامی کیمیکل کی بہت زیادہ مقدار پائی گئی ہے، اسی وجہ سے یہ دوا بچوں کے لئے زہر ثابت ہوسکتی ہے۔

دوسری جانب بھارتی میں بھی ان دواؤں کے حوالے سے تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے تاہم بھارت کے متعلقہ حکام یا دوا ساز کمپنی نے اس حوالے سے کوئی موقف نہیں دیا۔

انڈیا

medicine

cough

Tabool ads will show in this div