آرمی چیف کی امریکی وزیر دفاع اور نائب وزیرخارجہ سے ملاقات

سپہ سالار کے اعزاز میں آنر کورڈن تقریب۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ ( Army Chief General Qamar Javed Bajwa ) نے امریکی وزیر دفاع لائیڈ جیمز آسٹن (تھری) ( JAMES LLOYD AUSTIN 3 ) ، نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر اور نائب وزیر خارجہ سے منگل 4 اکتوبر کو ملاقاتیں کیں۔

ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور، علاقائی سلامتی کی صورت حال سمیت مختلف شعبوں میں تعاون پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

پاک افواج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) ( ISPR ) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے دورہ امریکا کے دوران امریکی وزیر دفاع لائیڈ جیمز آسٹن، مشیر قومی سلامتی اور نائب وزیر خارجہ وینڈی روتھ شرمین سے ملاقاتیں کیں۔ دوران ملاقات آرمی چیف نے سیلاب زدگان کیلئے تعاون پر امریکی حکام کا شکریہ ادا کیا۔

آرمی چیف نے کہا عالمی شراکت داروں کی مدد سے پاکستان میں سیلاب زدگان کی جلد بحالی ممکن ہوگی، جنرل قمر جاوید باجوہ نے فلوریڈا میں سمندری طوفان سے تباہی پرافسوس کیا اور کہا کہ متاثرین کے نقصان اور درد کو بخوبی سمجھتے ہیں کیونکہ پاکستان موسمیاتی تبدیلی سے دوچار ہے۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ دونوں جانب سے اتفاق کیا گیا کہ پاکستان اور امریکا تجارت اور سرمایہ کاری کے ذریعے تعاون جاری رکھیں گے۔ ذرائع کے مطابق جنرل قمر جاوید باجوہ سے وزیر دفاع لائیڈ آسٹن کے علاوہ نیشنل انٹیلی جنس کے ڈائریکٹر ایورل ڈی ہینس اور سی آئی اے کے ڈائریکٹر ولیم جے برنز کی ملاقات متوقع ہے۔

پینٹاگون آمد پر آرمی چیف کے اعزاز میں دونوں ممالک کے درمیان 75 سالہ تعلقات مکمل ہونے پر تقریب کا بھی اہتمام کیا گیا۔ ترجمان پینٹاگون کے مطابق پاک امریکا دیرینہ شراکت داری 75 سال بعد بھی قائم ہے اور آج ہونے والی ملاقات میں اہم باہمی دفاعی مفادات کو حل کرنے کے مواقع پر توجہ مرکوز کی گئی ہے۔

دوسری جانب پاکستانی حکام کی امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن سے بھی ون آن ون ملاقات متوقع ہے، لیکن امریکی ذرائع کا کہنا ہے کہ اس ملاقات کے امکانات بہت کم ہیں۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اس وقت امریکی حکام سے ملاقات کے سلسلے میں واشنگٹن میں موجود ہیں، تاہم پاکستان سفارت خانے نے آرمی چیف کی سفری مصروفیات کے حوالے سے بیان جاری نہیں کیا۔

ڈی جی آئی ایس آئی اور ڈی جی ملٹری آپریشن بھی آرمی چیف کے ہمراہ موجود ہیں، آرمی چیف امریکا روانگی سے قبل نیویارک میں اقوام متحدہ کے امن دستے سے بھی ملاقات کریں گے۔

سینٹرل کمانڈ ہیڈکوارٹرز کا متوقع دورہ

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ امریکا میں پاکستانی سفارت خانے میں پاکستان کے امور میں دلچسپی رکھنے والے امریکی اسکالرز اور تھنک ٹینک کے ارکان سے ملاقات کے بعد 5 اکتوبر 2022 کو پاکستان کے لیے روانہ ہوں گے، ابتدائی معلومات کے مطابق آرمی چیف امریکی سینٹرل کمانڈ کے ہیڈکوارٹرز کا بھی دورہ کریں گے لیکن اگر وہ بدھ کو روانہ ہوتے ہیں تو اس دورے کے بہت کم امکانات ہیں۔

آنر کورڈن تقریب

چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ کی پینٹاگون آمد اور سرکاری دورے پر امریکی سیکریٹری دفاع لائیڈ جے آسٹن تھری نے اعزازی کورڈن کی میزبانی کی۔ سرکاری تقریب کے بعد میڈیا بریفنگ نہیں ہوئی، جب کہ تقریب میں میڈیا کو محدود تعداد میں مدعو کیا گیا۔

امریکا میں یہ تقریبات بین الاقوامی خیر سگالی کو فروغ دیتی ہیں، جب کہ یہ اعزازی کورڈن امریکی صدر، نائب صدر، قانونی تقرریوں، امریکی فوج کے جنرل یا فلیگ افسران کے ساتھ ساتھ ان عہدوں کے مساوی غیر ملکی معززین کے لیے مخصوص ہے۔

رواں سال اپریل میں بھارت کے وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ کی پینٹاگون آمد پر امریکی ہم منصب کے ساتھ دوطرفہ ملاقات ہوئی تھی، جہاں بھارتی وزیر دفاع کو بھی اعزازی کارڈن سے نوازا گیا تھا۔

pentagon

ISPR

COAS BAJWA

JAMES LLOYD AUSTIN 3

Tabool ads will show in this div