چھوٹا سا گاؤں جس کی ایک تہائی آبادی یوٹیوب سے پیسہ کماتی ہے

تین ہزار آبادی والا گاؤں ’یوٹیوب ولیج‘ کے نام سے مشہور ہے

دنیا بھر میں لاکھوں لوگ یوٹیوب (YOUTUBE) پر ویڈیوز بناکر پیسے کماتے ہیں اور کئی لوگ اس کام سے راتوں رات ارب پتی بھی بن گئے ہیں۔

لیکن بھارت کے ایک چھوٹے سے گاؤں کی ایک تہائی آبادی کا ذریعہ معاش ہی اب یوٹیوب ہے اور انکے چینلز پر لاکھوں سبسکرائبرز موجود ہیں جس سے وہ ماہانہ لاکھوں روپے کمارہے ہیں۔

چھتیس گڑھ کا تین ہزار آبادی والا یہ گاؤں ’یوٹیوب ولیج‘ کے نام سے مشہور ہے جس کے زیاد تر باشندے پہلے کسان تھے اور صبح سویرے اپنی فصلوں پر کھیتی باڑی کیلئے جایا کرتے تھے لیکن گاؤں کے دو نوجوانوں کی یوٹیوب پر کامیابی سب کو اس جانب کھینچ لائی۔

انڈیا کے یوٹیوب ولیج کی کہانی دو دوستوں گیانیندرا شکلا اور جئے ورما کے ساتھ شروع ہوتی ہے جنہوں نے یوٹیوب پر ویڈیوز بنانے کیلئے اپنی نیٹ ورک انجینئر اور ٹیچر کی ملازمتیں چھوڑ دیں۔

کچھ ہی عرصے میں انہوں نے یوٹیوب سے معقول رقم کمانا شروع کردی اور ان کی کامیابی کی بات پورے گاؤں میں پھیل گئی جس نے دوسروں کو بھی ان کے نقش قدم پر چلنے کی ترغیب دی۔

گیانیندرا شکلا نے بتایا کہ وہ پہلے نیٹ ورک انجینئر کے طور پر کام کرتے تھے، انکے دفتر میں تیز رفتار انٹرنیٹ تھا جہاں وہ فرصت کے اوقات میں یوٹیوب ویڈیوز دیکھتے تھے۔

شکلا نے بتایا کہ 12-2011 میں یوٹیوب کا نیا ورژن لانچ ہوا تو اُس وقت یوٹیوب پر بہت کم چینلز تھے، میں اپنی 9 ٹو 5 جاب سے مطمئن نہیں تھا اس لیے میں نے نوکری چھوڑ دی اور یوٹیوب پر کام شروع کیا۔

آج شکلا کے گاؤں کی تقریباً 40 فیصد آبادی اب یوٹیوب، ٹک ٹاک یا انسٹاگرام جیسے پلیٹ فارمز کے لیے ویڈیوز بنانے میں مصروف ہے جس میں سب سے کم عمر 15 سال کی بچی اور سب سے بڑی 85 سالہ دادی ہیں۔

تلسی گاؤں کے لوگ کامیڈی اور موسیقی سے لیکر تعلیم تک کے چینلز چلارہے ہیں جن کے یوٹیوب پر لاکھوں سبسکرائبرز ہیں، یوٹیوب ویڈیوز بنانے سے غریب کسانوں کی آمدنی تین گنا تک بڑھ گئی اور اب انہوں نے اپنے پرانے پیشے کوچھوڑ دیا ہے۔

youtube

INDIAN YOUTUBE VILLAGE

Tabool ads will show in this div