پاکستانی فلم جوائے لینڈ( Joyland) آسکرز کے لیے نامزد

پاکستان کی آسکرز سلیکشن کمیٹی کی جانب سے اب تک جوائے لینڈ سمیت نوفلموں کو آسکر کے لیے نامزد کیا گیا۔

پاکستانی فلم جوائے لینڈ نے Festival de Cannes میں بھی جیوری ایوارڈ جیتا۔ اب اسی فلم کو پاکستانی اکیڈمی سیلکشن کمیٹی نے 95 ویں اکیڈمی ایوارڈز کے لیے منتخب کر لیا ہے۔

پاکستانی فلم میکر صائم صادق نے اپنی فلم جوائے لینڈ کی نامزدگی کے حوالے سے اپنے سوشل میڈیا اکاونٹ کے ذریعے مداحوں کو آگاہ کیا۔

جوائے لینڈ فلم نے Festival de Cannes میں بھی جیوری ایوارڈ اپنے نام کیا ۔ یہی نہیں ٹورنٹو فلم فیسٹول میں بھی جوائے لینڈ فلم نے کامیابی اپنے نام کی۔ ابھی فلم کی ریلیز ڈیٹ کا اعلان ہوا ہی تھا کہ یہ فلم 18 نومبر سے ملکی سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی۔ فلم کی ریلیز ڈیٹ کے اعلان کے بعد سے ہی یہ بات سامنے آگئی کہ پاکستان کی آسکر کمیٹی نے اس فلم کو آسکر کے لئے پاکستان کی جانب سے نامزد کر لیا ہے ۔

جوائے لینڈ سے قبل بھی پاکستانی فلموں کی آسکر کے لیے نامزدگی.

جوائے لینڈ نویں پاکستانی فلم ہے ، جسے پاکستان کی اکیڈمی سیلکشن کمیٹی نے پاکستان کی جانب سے منتخب کرکے آسکر فلمی میلے کے لیے بھیجا۔ تاہم بعد میں یہ فلمیں شارٹ لسٹ نہ ہوسکیں ۔ آسکر کمیٹی کی جانب سے اب تک منتخب ہونے والی پاکستانی فلموں کے نام یہ ہیں۔

2013 زندہ بھاگ

2014 دختر

2015 مور

2016 ماہِ میر

2017 ساون

2018 کیک

2019 لال کبوتر

2020 میں فلم زندگی تماشہ لیکن یہ فلم ریلیز سے قبل ہی تنازعات کا شکار ہوگئی ۔ آسکر ایوارڈ کے لیے بینادی شرط ہے کہ کسی بھی فلم کی نامزدگی اسی صورت میں ہوتی ہے کہ جب وہ فلم ملکی سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کی گئی ہو۔ ان تمام فلموں میں سے اب تک کوئی بھی فلم آسکر کے لیے حتمی طور پر جگہ نہیں بنا سکی۔

Tabool ads will show in this div