اسلام آباد: پولیس کا شہری کو حراست میں رکھ کر تاوان مانگنے کا انکشاف

عدالت نے ایس ایچ او انڈسٹریل ایریا کو فوری معطل کرنے کا حکم دے دیا

وفاقی دارالحکومت میں پولیس کی جانب سے شہری کو حراست میں رکھ کر تاوان مانگنے کا انکشاف ہوا ہے۔

اسلام آباد ہائیکورٹ میں شہری محمد اویس پراچہ کی درخواست پر جسٹس طارق محمود جہانگیری نے ایس ایچ او انڈسٹریل ایریا کی فوری معطلی کا حکم دے دیا۔

حکمنامے کے مطابق ایس ایچ او نے تسلیم کیا کہ محمد نعیم پراچہ کو غیر قانونی طور پر حراست میں رکھا گیا جبکہ روزنامچے میں محمد نعیم پراچہ کی گرفتاری کا بھی کوئی ذکر نہیں۔

پولیس نے شہری کو حبس بےجا میں رکھا اور اذیت کا نشانہ بھی بنایا۔ محمد نعیم پراچہ کے مطابق پولیس 6 کروڑ روپے تاوان کیلئے دباؤ ڈالتی رہی۔

ایس ایچ او نے بتایا کہ حراست میں لیا گیا شہری دفعہ 406 کے مقدمے میں ملزم ہے۔ عدالت نے محمد نعیم پراچہ کو رہا کرنے دیتے ہوئے آئی جی اسلام آباد کو ایس ایچ او انڈسٹریل ایریا فوری معطل کرنے کا حکم دیدیا۔

عدالت نے ایف آئی اے کو معاملے کی 10 روز میں تحقیقات کر کے رپورٹ جمع کرانے کا حکم دیتے ہوئے سماعت 17 اکتوبر تک ملتوی کر دی۔

islamabad police

Islamabad High Court (IHC)

Tabool ads will show in this div