چوروں کو کبھی قبول نہیں کریں گے، عمران خان

اپنی تیاری مکمل کررہا ہوں جلد ہی میں کال دوں گا، سابق وزیر اعظم

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا کہ چوروں کو کبھی قبول نہیں کریں گے۔

مظفر آباد میں جلسہ عام سے خطاب کے دوران عمران خان نے کہا کہ 5 اگست 2019 کو بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کی تو ہم نے بھارت سے تمام تعلقات ختم کردیئے، ہم پر مسلط کئے گئے چوروں کو شرم نہیں، یہ بھارت سے چھپ چھپ کر تعلقات بڑھا رہے ہیں، ان کا خدا پیسہ ہے، ان کو صرف پیسہ نظر آتا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ شہباز شریف کا شکر گزار ہوں کہ انہوں نے میری اپنے پرنسپل سیکریٹری سے گفتگو لیک کردی، شہباز شریف مجھے نقصان پہنچانا چاہتے تھے لیکن انہوں نے اپنا ہی بیڑا غرق کردیا۔

عمران خان نے کہا کہ کشمیری عوام وعدہ کریں کہ ضمیر بیچنے والوں کو اسمبلیوں میں نہ آنے دیں کیونکہ یہ جمہوریت اور آپ کے ووٹ کی توہین ہے۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ شہباز شریف امریکا میں مہنگے ہوٹلوں میں ٹھہرے، سندھ کے لوگ سیلاب کے عذاب سے دوچار ہیں اور بلاول بھٹو زرداری امریکا میں کہانیاں سنا رہے ہیں۔

اسحاق ڈار پر تنقید کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ ایک شخص 5 سال بعد واپس آیا ہے، وہ کرپشن کیسز سے ڈر کر باہر بھاگ گیا تھا، جب نیب نے اس سے اربوں روپے کی جائیداد کا پوچھا تو وہ بیرون ملک بھاگ گیا۔ اس طرح کے لوگوں کو ہم این آر او دیں گے تو جیلوں میں لوگوں کو کیوں قید کیا گیا ہے۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ اللہ نے ہمیشہ اچھائی کے کھڑے ہونے اور برائی کے خلاف لڑنے کا حکم دیا ہے، اللہ نے کہیں نہیں کہا کہ ہم نیوٹرل ہوجائیں، جب سے یہ حکومت اقتدار میں آئی ہے تو روپے کی قدر میں 33 فیصد کجمی ہوئی ہےھ، یہ لوگ امیر اور قوم غریب ہوگئی، ان لوگوں کو ڈیل کے ذریعے واپس لانے سے بڑا جرم نہیں ہوسکتا۔

عمران خان نے کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وزیر خزانہ بنا ملک کا دیوالیہ نکال کرگیا۔ 2018 میں ملکی تاریخ کا سب سے بڑا تجارتی خسارہ چھوڑ کر گیا۔ تیل کی قیمت آدھی ہونے کے باوجود تاریخی خسارہ چھوڑ کرگیا، اگر ہم نے خاموش ہوکر یہ چیز برداشت کرلی تو ہمارے اور بھیڑ بکریوں میں کوئی فرق نہیں رہے گا۔

چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ جو بھی سمجھتا ہے کہ ہم ان چوروں کو قبول کرلیں گے وہ غلط فہمی میں نہ رہیں، جلد ہی میں کال دوں گا، میں اپنی تیاری مکمل کررہا ہوں، میں جب بھی کال دوں گا عوام کو ملک کے مستقبل کے لئے باہر نکلنا ہوگا۔

عمران خان نے کہا کہ چیف الیکشن کمشنر درحقیقت چیف الیکشن فراڈ ہے، سلطان سکندر میں ابھی بھی کوئی غیرت رہ گئی ہے تو استعفیٰ دے دیں، انہیں ملک کے عوام کے مینڈیٹ کی خلاف ورزی پر قوم معاف نہیں کرے گی، ہم ہر قانونی کارروائی کریں گے۔

PTI

IMRAN KHAN

PTI rally

Tabool ads will show in this div