دُہری تنخواہ معاملہ؛ سابق ترجمان حکومت بلوچستان لیاقت شاہوانی کے لئے اخباری نوٹس جاری

سرکار اپنے پیسے تو مانگ رہی ہے میرے واجبات مجھے نہیں دے رہی، سابق ترجمان حکومت بلوچستان

سابق ترجمان حکومت بلوچستان لیاقت شاہوانی کو دُہری تنخواہ واپس جمع کرانے سے معلق اخباری نوٹس جاری کر دیا گیا۔

وزیر اعلی سیکرٹریٹ کی جانب سے شائع کرائے گئے نوٹس میں کہا گیا ہے کہ سابق ترجمان لیاقت شاہوانی نے دہری تنخواہ کی مد میں 22 لاکھ 94 ہزار روپے سے زائد قومی خزانے سے وصول کیے اور بارہا انہیں تحریری و زبانی آگاہ کیا گیا کہ پیسے واپس جمع کرائیں۔

لیاقت شاہوانی ماہانہ اقساط پر مطلوبہ رقم جمع کرانے پر راضی بھی ہوئے تھے اور دو اقساط جمع کرانے کے بعد ان پر 12 لاکھ 35 ہزار200 روپے واجب الادا ہیں۔

نوٹس میں لیاقت شاہوانی کو کہا گیا ہے کہ اگر فوری طور پر پیسے جمع نہ کرائے گئے تو ان کے خلاف اینٹی کرپشن میں ایف آئی آر درج کی جائے گی۔

وزیر اعلی سیکرٹریٹ سے جاری نوٹس پر سابق ترجمان لیاقت شاہوانی رد عمل بھی سامنے آ گیا ، اپنے ٹویٹر پیغام میں انہوں نے کہا کہ دہری تنخواہ کی مد میں 11لاکھ روپے حکومت کو واپس کرا چکا ہوں۔

لیقات شاہوانی کا موقف ہے کہ محکمہ ایس اینڈ جی اے ڈی کی طرف پچھلے سال کے واجبات ہیں۔ میں نے کہا حکومت میرے واجبات دہری تنخواہ کی مد میں ایڈجسٹ کرے۔ ایک سال کے دوران صوبائی سول سیکرٹریٹ کے 50 چکر لگا چکا ہوں لیکن واجبات کی ادائیگی میں محکمہ سست روی کا مظاہرہ کر رہی ہے سرکار اپنے پیسے تو مانگ رہی ہے میرے واجبات مجھے نہیں دے رہی۔

بلوچستان

Liaqat Shahwani

Tabool ads will show in this div