ارباب نیازکرکٹ اسٹیڈیم کی تعمیر میں تاخیر، تعمیراتی ٹھیکہ منظور نظر کنٹریکٹر کو دینے کا انکشاف

فیس کی مد میں ساڑھے 4 کروڑ روپے کی اضافی ادائیگی بھی کی گئی

پشاور میں ارباب نیازکرکٹ اسٹیڈیم کی تعمیر میں تاخیر کی وجہ تعمیراتی ٹھیکہ منظور نظرکنٹریکٹرکودینے کا انکشاف ہوا ہے۔

ایم اینڈ ای یونٹ کی رپورٹ کے مطابق ارباب نیازکرکٹ اسٹیڈیم کی تعمیر میں ناقص میٹریل کے استعمال کی نشاندہی ہوئی ہے۔تعمیرسے قبل اسٹیڈیم کی دیواروں میں دراڑیں پڑگئی ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ پی سی ون میں کنسلٹنٹ کے لئے 1 کروڑ54 لاکھ روپے مختص تھی مگر ان سے کٹوتی یا جرمانہ کی بجائے کنسلٹنٹ کی رقم میں 5 کروڑ 28 لاکھ روپے تک اضافہ کیا گیا۔

یہ بھی بتایا گیا کہ اسٹیڈیم میں سوئمنگ پول کی جگہ تالاب نما جگہ تیار کی گئی جس پر اعتراض اٹھایا گیا۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ ٹھیکےدار کو تبدیل کرنے کی سفارش بھی کی گئی ہے۔ مزید کہا گیا کہ ایم اینڈ ای ٹیم نے کنسلٹنٹ سے ریکوری کرنے،اسٹیک ہولڈرز کے خلاف کارروائی اور مزید ادائیگی نہ کرنے کی سفارش کی ہے۔

ایم اینڈ ای یونٹ کی رپورٹ میں انکشاف ہوا کہ منصوبہ دسمبر2021 میں مکمل ہونا تھا تاہم تاحال اس کا کام مکمل نہیں ہوسکا ہے اور اسٹیڈیم کی تعمیر کرنے والےکو ایسے کسی پروجیکٹ کا پیشگی تجربہ بھی نہیں تھا۔

پشاور

arbab niaz stadium

Tabool ads will show in this div