چابی والا کھلونا لاشیں گرا کر مقصد حاصل کرنا چاہتا ہے، جاوید لطیف

ادارے اگر نیوٹرل ہوگئے ہیں تو نظر بھی آنا چاہیے، جاوید لطیف

وفاقی وزیر اور لیگی رہنما جاوید لطیف کا کہنا ہے کہ چابی والا کھلونا لاشیں گرا کر اپنا مقصد پورا کرنا چاہتا ہے، لیکن ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر اور ن لیگ کے رہنما جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ کوئی بھی احتجاج کرے اس کا حق ہے لیکن مسلح احتجاج نہیں کرنے دیں گے، پاکستان کےوسیع تر مفاد کیلئے ہرقربانی دیں گے، ریاست کے تحفظ کیلئے محافظ اداروں سے آگے کھڑے ہیں۔

جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ عمران خان کو کہا گیا ہے کہ لاشیں گریں گی تو تھرڈ ایمپائر کی طرف انگلی اٹھے گی، تم ایک چابی والے کھلونے ہو لاشیں گرانا چاہتے ہو، لیکن ہم ایسا ہونے نہیں دیں گے۔

لیگی رہنما نے کہا کہ یہ نومبر کی بات کررہا ہے اورلاشیں گرا کر اپنا مقصد پورا کرنا چاہتا ہے، لیکن ہم اپنےساتھ ظلم برداشت کرلیں گے ریاست کے ساتھ کھلواڑ برداشت نہیں کریں گے، کوئی نہ سمجھے تباہی، بربادی ہو جائے اور ہم خاموش تماشائی بن جائیں گے۔

جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ ہمیں معلوم ہے آج بھی انہیں سہولت کاری دی جارہی ہے، اگر کوئی سہولت کاری آج بھی دی جارہی تو ہوش کے ناخن لئے جائیں، اداروں میں بیٹھے لوگوں کو کسی کے عشق میں مبتلا نہیں ہونا چاہے، ہمیں پاکستان کو آگے لیکر جانا ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ تم راتوں کو کن کن سے ملتے ہو، قوم کہہ رہی ہےلاڈلہ آج بھی لاڈلہ نظرآرہا ہے، ہمیں علم ہے تمہاری سہولت کاری کرنے والا یا والے تمہیں کس امید سے رکھے ہوئے ہیں، لیکن یہ 2018 نہیں 2022 ہے۔

جاوید لطیف نے مزید کہا کہ جسٹس شوکت صدیقی جو بات کررہے ہیں کہ 3 اداروں نے مل کر ایک بت کو تراشا ہے، کیا اس بت کو وہ سہولت اسی طرح مل رہی ہے یا ایک جانب سے کم اور ایک جانب سے زیادہ ہے، کیا وہ نیوٹرل ہوگئے ہیں، اگر ہوگئے ہیں تو نظر بھی آنا چاہے، آج کسی کو ڈھیل دی جارہی، کیا بھٹو اور نواز شریف کے لئے یہ تمام قانونی تقاضے پورے کئے گئے تھے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ہمیں علم ہے آپ اداروں سے کھلواڑ کے بعد مذہب سے بھی کھلواڑ کرتے آرہے ہو، آپ معیشت کو اور اداروں میں لوگوں کو دھمکیاں دیتے ہو، اگر ہم نے اداروں میں بیٹھے لوگوں کو دھمکی دی ہوتی تو آج ہم یہاں ہوتے۔

IMRAN KHAN

JAVED LATIF

Tabool ads will show in this div