آصف زرداری سمیت کئی شخصیات کے خلاف پرانے نیب مقدمات کے جائزے کا فیصلہ

قومی احتساب بیورو نے نیب ترمیم ایکٹ کے تحت مقدمات کا جائزہ لینے کا فیصلہ کیا ہے

قومی احتساب بیورو (NAB)نے نیب قانون میں تبدیلی کے بعد 25 سال پرانے کیسز کا بھی جائزہ لینے کا فیصلہ کرلیا ہے جن میںآصف زرداری کیخلاف درج پرانے مقدمات بھی شامل ہیں۔

موجودہ حکومت کی جانب سے نیب قانون میں ترمیم کے بعد قومی احتساب بیورو (NAB)نے 25 سال پرانے کیسز کا ترمیمی ایکٹ کے تحت جائزہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔

جن پرانے مقدمات کا از سر نو جائزہ لیا جائے گا ان میں سابق صدر آصف علی زرداری کے خلاف مقدمات بھی شامل ہیں۔

پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے سربراہ کے خلاف اُرسس ٹریکٹر، اے آر وائی گولڈ ریفرنس، ایس جی ایس کوٹیکنا اور پولو گراؤنڈ ریفرنس کئی دہائیوں سے زیر التوا ہیں۔ نیب نے پرانے کیسز سے متعلق وزارت قانون سے رائے مانگی تھی لیکن وزارت قانون نے رائے دینے سے گریز کیا تھا، وزارت قانون نے نیب کو خود فیصلہ کرنے کا کہا تھا۔

نیب نے مقدمات پر نظرثانی کے لیے ہائی کورٹ میں زیر التوا اپیلوں پر مہلت لینے کا فیصلہ کیا ہے، اس سلسلے میں درخواست بھی تیار کر لی گئی ہے۔

NAB

ASIF ZARDARI

Tabool ads will show in this div