ادویات کی قیمتیں بڑھانے کی سمری مسترد

ایک بھی دوا کی قیمت نہیں بڑھے گی، قادر پتیل

وفاقی وزیر صحت عبدالقادر پٹیل نے اودویات کی قیمتیں بڑھانے کی سمری یکسر مسترد کر دی۔

ترجمان وزارت صحت کے مطابق ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان (DRAP) نے 40 سے زائد ادویات کی قیمتوں میں اضافے کی سمری بھیجی تھی تاہم وفاقی وزیر صحت عبدالقادر نے اسے یکسر مسترد کر دیا۔

عبدالقادر پٹیل نے کہا کہ ہم عوامی لوگ ہیں اور عوام کی خدمت ہمارا نصب العین ہے، حکومت عوام کو ریلیف دینے کے لئے پُرعزم ہے، حکومت صحت کے شعبے میں عوام کو ریلیف دینے کیلئے عملی اقدامات کو یقینی بنا رہی ہے، ایک بھی دوا کی قیمت نہیں بڑھے گی۔

اس وقت ملک میں 70 سے زائد انتہائی ضروری اور جان بچانے والی ادویات مارکیٹ سے غائب ہیں۔

پاکستان فارسیوٹیکل اینڈ مینوفیکچررز ایسوسی ایشن (PPMA) ںے پیٹرولیم مصنوعات مہنگی ہونے، ڈالر کی قدر میں اضافے اور درآمدی کام پر ٹیکسوں کے باعث تمام ادویات 40 فیصد تک مہنگی کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

ادویہ ساز کمپنیوں کا کہنا تھا کہ موجودہ صورت حال میں 200 مالیکیولز کے خام مال کی درآمد روک دی گئی ہے کیونکہ ان کی پیداواری لاگت کمپنیوں کی استطاعت سے باہر ہے۔

عالمی مارکیٹ اور ملکی ضروریات کو دیکھتے ہوئے ڈریپ نے 40 سے زائد ادویات کی قیمتیں بڑھانے کی سمری کابینہ کو بھجوائی تھیں۔

Tabool ads will show in this div