عامر لیاقت کا پوسٹ مارٹم کرانے کا فیصلہ کالعدم قرار

پوسٹ مارٹم کرانے کے خلاف درخواست عامر لیاقت کی بیٹی نے دائر کی تھی

عدالت نے مرحوم اینکر پرسن کی قبر کشائی اور میت کا پوسٹ مارٹم کرانے سے متعلق فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔

ایڈیشنل سیشن جج کراچی شرقی کی عدالت میں عامر لیاقت کا پوسٹ مارٹم کرانے کے فیصلے کے خلاف درخواست پر سماعت کی۔

عدالت نے فریقین کا موقف سننے کے بعد پوسٹ مارٹم کرانے سے متعلق فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔

معاملے کا پس منظر

رواں برس 9 جون کوعامر لیاقت کراچی میں اپنی رہائش گاہ پر مردہ پائے گئے تھے۔

ایک شہری نے جوڈیشل میجسٹریٹ کے روبرو عامر لیاقت کا پوسٹ مارٹم کرانے کی درخواست کی تھی۔

جوڈیشل میجسٹریٹ نے عامر لیاقت کی قبر کشائی اور ان کے پوسٹ مارٹم کا حکم دیا تھا۔

مرحوم عامر لیاقت کی بیٹی نے اس فیصلے کے خلاف درخواست دائر کی تھی۔

اس حوالے سے سندھ ہائی کورٹ یں بھی درخواست زیر سماعت ہے، معاملے میں عامر لیاقت کی بیوہ دانیہ نے بھی پوسٹ مارٹم کرانے کی درخواست دائر کی ہے۔

aamir liaquat hussain

aamir liyaqat

Tabool ads will show in this div