سیکیورٹی فورسز کے قافلے پر خودکش حملہ، 4 اہلکار شہید

بہادر نوجوانوں کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی

شمالی وزیرستان کے علاقے میر علی میں فوجی قافلے پر ہونے والے خودکش حملے میں پاک افواج کے 4 اہل کار شہید ہو گئے۔

پاک افواج کے شعبہ تعلقات عامہ ( آئی ایس پی آر) کے مطابق فوجی قافلے پر حملہ شمالی وزیرستان کے علاقے میرعلی میں پتسی اڈہ کے قریب کیا گیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق خودکش حملے میں 4 فوجی جوان شہید ہوئے، شہداء میں لانس نائیک شاہزیب، لانس نائیک سجاد، سپاہی عمیر اور سپاہی خرم شامل ہیں۔ شہدا کے جسد خاکی اور دیگر زخمی اہلکاروں کو طبی امداد کیلئے کمبائنڈ ملٹری اسپتال ( سی ایم ایچ) منتقل کردیا گیا ہے۔

شعبہ تعلقات عامہ کا کہنا ہے کہ سیکیورٹی ایجنسی خود کش حمہ آور اور اس کے سہولت کاروں سے متعلق تحقیقات کر رہی ہے، پاک فوج دہشت گردی کے ناسور کے خاتمے کے لیے پرعزم ہے، ہمارے بہادر نوجوانوں کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی۔

وزیراعظم کی مذمت

وزیراعظم شہباز شریف نے فوجی قافلے پر حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی کے ناسور کا خاتمہ کرنے کے لئے قوم متحد ہو کر لڑے گی۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ وطن کیلئے جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والوں کو قوم خراج عقیدت پیش کرتی ہے۔ دہشت گردوں کے ناپاک عزائم کبھی کامیاب نہیں ہوں گے ۔

Tabool ads will show in this div