ڈالر سستا ہونے کا رجحان برقرار

امریکی ڈالر1 روپے 15 پیسے سستا

جمعہ کو ٹریڈنگ کے آغاز میں انٹر بینک میں ڈالر سستا ہونے کے رجحان برقرار رہا۔

جمعہ کی صبح جب ٹریڈنگ شروع ہوئی تو امریکی ڈالر1 روپے 15 پیسے سستا ہوکر 225 روپے پر فروخت کیا جانے لگا۔ دن کے اختتام پر انٹربینک میں ڈالر 2 روپے 11 پیسے سستا ہو کر 224 روپے 4 پیسے پر بند ہوا۔

اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر 220 روپے میں فروخت کیا گیا۔

6 دنوں کے دوران انٹربینک میں امریکی ڈالر 15 روپے جبکہ اوپن مارکیٹ میں 27 روپے سستا ہوچکا ہے ۔

جمعرات کو دن کے اختتام پر انٹربینک میں ڈالر2روپے65پيسےکم ہوکر226روپے15پيسےپربند ہوا تھا۔اوپن مارکیٹ میں ڈالر222روپےپرٹريڈنگ کررہا تھا۔

بدھ کو ڈالر کی قدر میں ریکارڈ کمی دیکھی گئی تھی۔ انٹر بینک میں ڈالر 9 روپے 58 پیسے جب کہ اوپن مارکیٹ میں 13 روپے 50 پیسے تک سستا ہوا تھا۔

دوسری جانب اسٹیٹ بینک نے ایکسچینج کمپنیز اور بینکوں کے فارن ایکس چینج آپریشنز کی نگرانی سخت کردی اور مرکزی بینک نے ضوابط کی خلاف ورزی پر2 ایکسچینج کمپنیز کی4 برانچوں کے آپریشن معطل کردیئے جبکہ ڈالرکی قیمت خریداور فروخت میں زیادہ فرق کا بھی نوٹس لیا گیا تھا۔

فوریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین ملک بوستان نے سماء ٹی وی سے گفتگو میں کہا تھا کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے امریکی حکام سے رابطے کے بعد امید ہے کہ آئی ایم ایف کی قسط جلد جاری ہوجائے گی ۔انہوں نے کہا تھا کہ ڈالر کی قدر مصنوعی انداز میں بڑھائی گئی تھی،ڈالر کی اصل ویلیو 180روپے سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے۔

ایکس چینج کمپنیز ایسوسی ایشن آف پاکستان کے جنرل سیکرٹری ظفر پراچہ کے مطابق اسٹیٹ بینک اور دیگر حکومتی اداروں کی عدم توجہی کے باعث انٹر بینک میں بڑے پیمانے پر سٹہ بازی کی وجہ سے ڈالر اس قدر بلندی پر پہنچ گیا تھا تاہم حکومتی ادارے اب متحرک ہوگئے ہیں جس کے بعد ڈالر کی قدر میں کمی شروع ہوگئی۔

dollar

FOREX Rates

Tabool ads will show in this div