بلوچستان کے ٹرانسپورٹرز کا کل سے شاہراہیں بند کرنیکا اعلان

مطالبات منظور نہ ہوئے تو احتجاج پر مجبور ہوں گے، ٹرانسپورٹرز

بلوچستان کے ٹرانسپورٹرز نے مطالبات کے حق میں قومی شاہراہیں بند کرنے کا اعلان کردیا۔ کہتے ہیں حکومت کی خاموشی کی وجہ سے ٹرانسپورٹر شدید احتجاج پر مجبور ہوئے، مطالبات پورے نہ ہوئے تو آج سے بلوچستان کی تمام شاہراہیں بند کردیں گے۔

کوئٹہ میں چیئرمین آل پاکستان بس یونین عتیق خان کاکڑ اور دیگر نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ بلوچستان کی ٹرانسپورٹ یونین کا مطالبات کیلئے 2 روز سے پُرامن احتجاج جاری ہے، لیکن حکومت کی خاموشی کی وجہ سے اب ٹرانسپورٹر شدید احتجاج پر مجبور ہوگئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ٹرانسپورٹرز کے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو کل 4 اگست سے بلوچستان کی تمام شاہراہیں احتجاجاً بند کردیں گے۔

ٹرانسپورٹرز رہنماؤں کا کہنا ہے کہ بلوچستان بس یونین کے مطالبات میں غیر قانونی کمپنیز کی بندش، ناجائز ٹول پلازوں کا خاتمہ اور پبلک ٹرانسپورٹ کو انڈسٹری کا درجہ دینا شامل ہے، جسے فوری طور پر منظور کیا جائے۔

بلوچستان

TRANSPORTERS PROTEST

Tabool ads will show in this div