بالی وڈ اسٹار عامر خان انتہا پسند رویئے سے پریشان

بالی وڈ کی نئی آنے والی فلم لال سنگھ چڈھا کے خلاف سوشل میڈیا پر مہم جاری

**بھارت میں مذہبی انتہا پسندی پر آواز بلند کرنے والی بالی ووڈ کے مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان ایک بار پھر تنقید کی زد میں آگئے ہیں اور سوشل میڈیا پر ان کی فلم Laal Singh Chaddha کے بائیکاٹ کی مہم تیز ہوگئی ہے۔ **

چار سال بعد مسٹر پرافیکٹشنیٹ کہلائے جانے والے اداکار عامر خان کی نئی بھارتی فلم گیارہ اگست کو نمائش کے لئے پیش کی جارہی ہے۔

تاہم ان دنوں عامر خان بھارتی انتہا پسندوں کی جانب سے شدید تنقید کا سامنا ہے ۔ جواز بنایا جا رہا ہے 2015 میں دیئے گئے ایک انٹرویو کو، جس میں عامر خان اپنی اہلیہ کرن کا ذکر کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ بھارت میں برداشت کم ہوتی چلی جا رہی ہے ۔ اس بڑھتی گھٹن سے بے چین ہو کر وہ بھارت چھوڑنا چاہتے ہیں۔

عامر خان اور فلم کی مرکزی کاسٹ میں شامل کرینہ کپورپر بھی تنقید کی جارہی ہے۔ جس میں کرینہ کے اس بیان کو جواز بنایا جا رہا ہے کہ ہماری فلمیں نہ دیکھیں ہم آپ پر دباؤ نہیں ڈال رہے۔

انتہا پسند ہند ایک بار پھر بالی وڈ اسٹار عامر خان کوآڑے ہاتھوں لیتے ہوئے فلم کی بائیکاٹ کا مطالبہ کر رہے ہیں ۔ایک ٹیوٹر صارف نے میم شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ ہم دوسرے گولے پر جا رہے ہیں یہاں عدم برداشت بہت ہے۔

ایک صارف نے لکھا کہ لال سنگھ چڈھا دیکھنے سے پہلے یہ یاد رکھیں گا کہ عامر خان ایک ترکش خاتون اول کو دیکھ کر مسکرا رہے تھے ، جس دن ترکی نے کشمیر کا ساتھ دیتے ہوئے پاکستانی موقف کو اختیار کیا۔

ایک صارف نے عامر خان کی فلم پی کے ایک اسکرین شاٹ کو شیئر کیا کہ ہم بھولیں گے نہیں کبھی نہیں بھولیں گے۔

عامر خان کا کہنا ہے کہ بائیکاٹ لال سنگھ چڈھا کا ٹرینڈ دیکھ کر بے حد افسوس ہو رہا ہے

Bollywood

AAMIR KHAN

kareena kapoor

LAAL SINGH CHADDHA

Tabool ads will show in this div