بولڈ فوٹو شوٹ کرانے پر رنویر سنگھ مشکل میں پھنس گئے

اداکار نے کچھ دن قبل ایک میگزین کے لیےعریاں فوٹو شوٹ کروایا تھا

ممبئی کے ایک پولیس اسٹیشن پر بولڈ فوٹو شوٹ کرانے پر رنویر سنگھ کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔

بھارتی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق ممبئی پولیس کی جانب سے رنویر سنگھ کے خلاف عریاں فوٹو شوٹ کرانے پر انڈین پینل کوڈ (آئی پی سی) اور انفارمیشن ٹیکنالوجی (آئی ٹی) ایکٹ کے تحت ایف آئی آر درج کر لی گئی۔

پولیس اسٹیشن کے ایک اہلکار نے بتایا کہ ممبئی کی ایک غیر سرکاری تنظیم (این جی او) نے اداکار کے خلاف شکایت درج کرانے کے لیے چیمبو پولیس سے رابطہ کیا تھا۔ اس شکایت کی بنیاد پر پولیس نے سنگھ کے خلاف تعزیرات ہند کی مختلف دفعات جیسے 292 (فحش کتابوں کی فروخت وغیرہ)، 293 (نوجوانوں کو فحش اشیاء کی فروخت)، 509 (لفظ، اشارہ یا عمل سے خواتین کے جذبات کو ٹھیس پہنچانا) اور انفارمیشن ٹیکنالوجی ایکٹ کی دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کی ہے۔

اس سے قبل پولیس نے کہا تھا کہ این جی او کے ایک عہدیدار نے الزام لگایا تھا کہ اداکار نے عام طور پر خواتین کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی ہے اور اپنی تصاویر کے ذریعے ان کی عزت کی توہین کی ہے۔

اس کے بعد این جی او اور ایک خاتون وکیل نے چیمبور پولیس اسٹیشن میں اداکار کے خلاف الگ سے شکایتیں جمع کرائی ہیں۔

خیال رہے کہ اداکار رنویر سنگھ نے کچھ دن قبل ایک میگزین کے لیے عریاں فوٹو شوٹ کروایا تھا جس کے بعد مختلف حلقوں کی جانب سے انہیں سخت تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

Ranveer Singh

Tabool ads will show in this div