سوات اور ملحقہ علاقوں میں ہیضہ پھیلنے لگا

وادی کالام کے مضافاتی علاقے سب سے زیادہ متاثر

سوات اورملحقہ علاقوں میں ہیضے کی بیماری نے وبائی شکل اختیار کرلی ہے۔

سوات میں سیدوشریف اسپتال سمیت مقامی اسپتالوں میں ہیضے سے متاثرہ مریضوں کی بڑی تعداد لائی جارہی ہے۔

سوات میں ہیضےنے وبائی شکل اختیار کرلی ہے۔ وادی کالام کے مضافاتی علاقے سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔

میڈیکل کمیپ لگا کر مریضوں کا علاج کیا جارہاہے۔مینگورہ شہر،سیدوشریف، تحصیل مٹہ سمیت دیگرعلاقوں میں ہیضے کی وباء سے سیکڑوں افراد متاثر ہوئے ہیں۔

ڈی ایم ایس سیدو شریف اسپتال ڈاکٹرمحمد خان نے بتایا کہ سیدوشریف تدریسی اسپتال میں ایمرجنسی نفاذ کردی گئی ہے۔ عید کے بعد سے اب تک 2 ہزار سے زائد مریض سیدوشریف اسپتال لائے گئے جن میں سے 2 مریض دم توڑگئے۔

محکمہ صحت نے وجوہات جاننے کے لئے ٹیمیں تشکیل دےدی ہیں۔ عوام سے مضرصحت خوراک سے اجتناب کرنے اور پانی کوابال کراستعمال کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

Swat

Tabool ads will show in this div