گال ٹیسٹ میں پاکستان کی فتح،کپتان بابر نے نوجوان کھلاڑیوں کو کریڈٹ دے دیا

جو پلان کیا تھا ویسے ہی پرفارمنس دی

پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے گال ٹیسٹ جیتنے کا کریڈٹ نوجوان کھلاڑیوں کو دے دیا۔

گال میں سری لنکا کے خلاف پہلا ٹیسٹ میچ 4 وکٹوں سے جیتنے کے بعد قومی ٹیم کے کپتان بابراعظم نےپریس کانفرنس کرتےہوئے کہا کہ اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں کہ جو پلان کیا تھا ویسے ہی پرفارمنس دی۔

بابراعظم نے کہا کہ اس وکٹ پراسپنرز کو مدد ملتی تھی اور اسپنرز نے ہی اچھا پرفارم کیا اور نتیجہ ہمارے حق میں آیا۔

بابراعظم نے یہ بھی کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ فاسٹ بالرز بنائے ہیں اور فاسٹ بالرز نے فلیٹ ٹریک پر پاکستان کو میچز جتوائے ہیں تاہم گال میں دوسرے ٹیسٹ میچ میں دیکھیں گے کہ کس کمبی نیشن کے ساتھ جانا ہے۔

قومی ٹیم کے کپتان نے کہا کہ گال ٹیسٹ میں میرے لئے سنچری بنانا یادگار رہے گا کیوں کہ مشکل کنڈیشن میں سنچری بنانا یادگار رہتا ہے اور لوئر آرڈر کے ساتھ کھیلنا اور سنچری بنانا بہت مشکل کام ہے،بیٹنگ کے دوران لوئر آرڈر کو بھی سمجھانا پڑتا ہے۔

انھوں نے کہا کہ نوجوان کھلاڑی مختلف کنڈیشن میں منواتے ہیں تب ہی آپ کی صلاحیتوں کا پتہ لگتا ہے۔

انھوں نے اوپنرعبداللہ شفیق کی کارکردگی کو سراہا اور ان کو بہترین کھلاڑی قرار دیا۔ بابر اعظم نے کہا کہ عبداللہ شفیق بہترین شاٹس کھیلتا ہے،امید ہے کہ وہ مزید اچھی پرفارمنسز دیں گے۔

بابر اعظم کا کہنا تھا کہ ہرمیچ میں اچھا بھی ہوتا ہے اور برا بھی ہوتا ہے ،بری چیزوں کو بہتر کرنے کی کوشش کرینگے۔

سری لنکن کھلاڑی پرباتھ جےسوریا کو انھوں نے اہم کھلاڑِی قرار دیا تاہم انھوں نے یہ بھی زور دیا کہ پاکستان اپنی پرفارمنس پر فوکس کرتے ہوئے دوسرا میچ بھی جیتے گا۔

pakistan cricket team

Babar Azam

GALLE test

Tabool ads will show in this div