کراچی والے بارشوں کے نئے اسپیل کیلئےہوجائیں تیار

موسلا دھاربارش سے طغیانی کا خدشہ

مون سون کا نیا اسپیل آج سے پیر تک ملک کے بیشتر علاقوں میں بارش برسانے کا سبب بنے گا، جب کہ سندھ میں 24 سے 26 جولائی تک موسلا دھار بارش کا امکان ہے، جس سے ندی نالوں میں طغیانی کا خدشہ ہے۔

کراچی

میٹ آفس کی جانب سے کراچی والوں کو بارشوں کے نئے اسپیل کیلئے خبر دار کرتے ہوئے کہا ہے کہ سندھ میں 22 جولائی کو مون سون کا نیا طاقتور سسٹم داخل ہوگا، بارش کا نیا اسپیل ہفتہ23جولائی کی صبح کراچی پر اثر انداز ہوگا۔ نئے سسٹم کے تحت کراچی میں موسلا دھار بارش ہوسکتی ہے۔ بارش کا نیا اسپیل 26 جولائی تک بارشیں برسائے گا۔

پنجاب

محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری رپورٹس کے مطابق مون سون ہواؤں کی نئی انٹری کے بعد گجرات، پسرور اور دیگر علاقوں میں بادل برس پڑے ہیں، ظفروال اور گرد و نواح میں موسلادار بارش نے جل تھل ایک کر دیا۔

شہر اور قصبات میں گلیاں تالاب کا منظر پیش کرنے لگیں۔ محلہ مصطفیٰ آباد چونڈہ روڈ، مسلم ٹاؤن اور ننگل سودکاں میں پانی کھڑا ہوگیا، جس سے لوگ گھروں میں محصور ہو کر رہ گئے۔

خیبر پختونخوا

دوسری جانب خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں بھی بادل برس پڑے۔ صوابی اور دیگر علاقوں میں موسلادھار بارش سے ندی نالوں میں طغیانی جیسی صورت حال پیدا ہوگئی ہے۔

بلوچستان

محکمہ موسمیات کے مطابق بلوچستان کے بیشتر اضلاع کا موسم گرم اور مرطوب رہے گا، تاہم خضدار، آواران، لسبیلہ اور بارکھان میں تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے۔

پی ڈی ایم اے کے مطابق بلوچستان میں حالیہ بارشوں اور سیلاب سے 88 افراد زندگی کی بازی ہار گئے۔ نئے سسٹم کے تحت آج سے پیر تک ملک کے بیشتر علاقوں میں موسلادھار بارشوں کی پیش گوئی کی گئی ہے جس سے ندی نالوں میں طغیانی کا بھی خدشہ ہے۔

20 سے 26 جولائی تک

20 سے26 جولائی کے دوران کشمیر، گلگت بلتستان، اسلام آباد، راولپنڈی، مری ، اٹک، چکوال، جہلم، سیالکوٹ، نارووال، لاہور، گوجرانوالہ، گجرات، شیخوپورہ، فیصل آباد ، جھنگ ، میانوالی، خوشاب، سرگودھا، حافظ آباد، منڈی بہاؤالدین، سوات، مانسہرہ، کوہستان، ایبٹ آباد، ہری پور، پشاور، مردان، صوابی، نوشہرہ، کرم اور کوہاٹ میں تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ مزید بارش اور کہیں کہیں وقفے سے موسلادھار بارش کا بھی امکان ہے۔

21 سے 26 جولائی کے دوران

21سے26 جولائی کے دوران بنوں، لکی مروت ،ڈی آ ئی خان،ساہیوال ، اوکاڑہ ، بھکر، لیہ، ملتان، راجن پور، ڈیرہ غازی خان، بہاولپور، بہاولنگر، رحیم یار خان اور خانپورمیں تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ مزید بارش اور چند مقا مات پر وقفے سے موسلادھار بارش کا بھی امکان ہے۔

22 سے 26 جولائی تک

22سے26 جولائی کے دوران ژوب، زیارت، بارکھان، لورالائی، بولان ،کوہلو، قلات، خضدار، لسبیلہ ، نصیر آباد، جعفر آباد اور سبی میں تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ مزید بارش، جب کہ 24 سے 26 جولائی سے سندھ کے بیشتر اضلاع میں بھی تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ بارش کی پیشگوئی اور بعض مقا مات پر موسلا دھار بارش کا بھی امکان ہے۔

ممکنہ اثرات

20 سے23 جولائی کے دوران موسلادھار بارش کے باعث راولپنڈی/ اسلام آباد، پشاور، نوشہرہ، مردان، فیصل آباد،لاہور اور گوجرانوالہ، جب کہ 24 سے 26 جولائی کے دوران کراچی، حیدر آباد، ٹھٹہ، بدین، شہید بینظیر آباد، جامشورو، میر پورخاص، دادو، عمر کوٹ، جیکب آباد، لاڑکانہ اور سکھر میں بھی نشیبی علاقے زیر آب آنے کا خطرہ ہے۔

20 سے 23 جولائی کے دوران موسلا دھار بارش کے باعث راولپنڈی/ اسلام آباد ،مانسہرہ، دیر اور کشمیر، جب کہ 22 سے 25 جولائی کے دوران لورالائی، بارکھان، کوہلو، موسی خیل، شیرانی، سبی ، بولان اور ڈیرہ غازی خان کے پہاڑی اور مقامی ندی نالوں میں طغیانی کا خطرہ ہے۔

اس دوران کشمیر، گلیات ، مری ،چلاس، دیامیر، گلگت، ہنزہ، استور اور اسکردو میں لینڈ سلائیڈنگ کا خدشہ ہے۔

مسافر اور سیاح موسمی حالات کو مدنظر رکھ کر سفر کریں اور سفر کے دوران مزید محتاط رہیں۔

کاشتکار حضرات بارش کی پیشگوئی کے مطابق آبپاشی کریں۔

کراچی

flooding

weather

MET OFFICE

Monsoon Rain

Tabool ads will show in this div