بچوں میں پراسرارہیپاٹائٹس کا پھیلاو،عالمی ادارہ صحت نے خطرے کی گھنٹی بجا دی

35 ممالک میں پراسرار ہیپاٹائٹس وائرس سے 22 بچے ہلاک
Jul 15, 2022

برطانیہ سے ابھرنے والے اس وائرس سے ایک ماہ سے 16 برس کی عمر کے بچے متاثر ہو رہے ہیں

عالمی ادارہ برائے صحت کی ایک رپورٹ کے مطابق برطانیہ سے ابھرنے والے پراسرارہیپاٹائٹس کے وائرس سے اب تک 22 بچوں کی اموات ہو چکیں ہیں ۔ اس وائرس کا پھیلاو دنیا کے پانچ خطوں کے 35 ممالک میں ہوچکا ہے

عالمی ادارہ برائے صحت کے مطابق آٹھ جولائی تک اس وائرس میں مبتلا دنیا بھرسے 1010 کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں ۔ جبکہ اس وائرس کا شکار ایک ماہ سے 16 برس کی عمر تک کے بچے ہو رہے ہیں ۔

پراسرارہیپاٹائٹس کا پہلا کیس رواں برس اپریل میں برطانیہ میں رپورٹ ہوا ۔ متاثر ہونے والے بچوں کے لیبارٹری ٹیسٹ میں ہیپاٹائٹس اے اورای نہیں پایا گیا۔ تاہم عالمی ادارے کی رپورٹ کے مطابق بہت سے متاثرہ بچوں میں کورونا وائرس کی تو تشخیص ہوئی لیکن اب تک ڈیٹا نامکمل ہے۔

بچوں میں ہیپاٹائٹس کی علامات کیا ہیں ؟

1010 کیسز سے حاصل ہونے والے ڈیٹا کے مطابق 60 فی صد بچوں میں الٹی اوراسہال کی علامات پائیں گئی ، 53 بچوں میں یرقان ،52 فی صد متاثرہ بچوں میں کمزوری اور 50 فی صد بچوں میں پیٹ درد کی علامات دیکھیں گئیں ۔ وائرس کا شکار ہونے والے بچوں میں وائرس میں یرقان، اسہال، الٹی اور پیٹ میں درد جیسی علامات رپورٹ ہو رہی ہیں۔ان علامات کو واضع ہونے اور اسپتال میں داخل ہونے میں اوسط 4 دن کا عرصہ لگ رہا ہے

outbreak

WHO

Hepatitis

Tabool ads will show in this div