بزدار حکومت کا من پسند افراد کو ٹھیکے دے کر قومی خزانے کو نقصان پہنچانے کا انکشاف

وزیر اعلی پنجاب حمزہ شہباز شریف نے تحقیقات کا حکم دے دیا

پی ٹی آئی کے دور حکومت میں سابق وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار کے شہر تونسہ میں من پسند ٹھیکیداروں کو تعمیراتی کام دے کر قومی خزانے کو نقصان پہنچانے کا انکشاف ہوا ہے۔

سماء کو ملنے والی دستاویزات کے مطابق تونسہ میں 3 کروڑ 42 لاکھ روپے کی لاگت کے ترقیاتی کام کا ٹھیکہ کسی منصوبہ بندی کے بغیر بلیو آئیڈ نامی کمپنی کو دیا گیا۔

لوکل فنڈ آڈٹ کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ من پسند ٹھیکیداروں سے کرائے گئے تعمیراتی کام پر ایک کروڑ روپے ٹیکس وصول ہوا لیکن یہ رقم بھی سرکاری خزانے میں نہیں آئی۔

آڈٹ حکام کا کہنا ہے کہ لوکل فنڈ آڈٹ نے تونسہ میں ہونے والی ٹیکس چوری اور غیر منظور شدہ تعمیراتی کام پر باقاعدہ انکوائری کی ہے، جس سے معلوم ہوا ہے کہ تونسہ میں رانا محمد ظفر اقبال ،شاہد منظور اور عامر سہیل کو من پسند کی بنیاد پر ٹھیکے دئیے گئے۔

تونسہ شریف میں کئے جانے والے تعمیراتی کام میں کی جانے والی ہیرا پھیروں سے متعلق لوکل فنڈ آڈٹ کی رپورٹ اعلی حکام تک پہنچائی گئی، جس پر وزیر اعلی پنجاب حمزہ شہبازشریف نے تحقیقات کا حکم دے دیا۔

USMAN BUZDAR

Tabool ads will show in this div