مسجد الحرام میں دل کا دورہ پڑنے والے پاکستانی عازم کو بچالیا گیا

پاکستانی عازم حج کی صحت مسلسل بہتر ہو رہی ہے، سعودی وزارت صحت

مسجد الحرام میں نماز کی ادائیگی کے دوران دل کا دورہ پڑنے والے پاکستانی عازم کو بروقت طبی امداد دیکر بچالیا گیا۔

حج کے لیے آئے پاکستانی شہری کو مسجد حرام میں نماز ادا کرتے ہوئے سینے میں تکلیف شروع ہوئی اور ان کے دل کی دھڑکن بڑھ گئی۔

محکمہ صحت نے بتایا کہ مریض کو ضروری طبی امداد فراہم کرنے کے بعد اس کی جان بچالی لی ہے تاہم ابھی انکی حالت پرنظر رکھی جا رہی ہے، طبیعت بہتر ہونے پر ہی انہیں مناسک حج ادا کرنے کی اجازت دی جائے گی۔

سرکاری خبر ایجنسی ایس پی اے کے مطابق وزارت صحت نے کہا ہے کہ پاکستانی عازم حج کو کنگ عبداللہ میڈیکل سٹی کے ماتحت امراض قلب اسپتال لے جایا گیا۔

وزارت صحت نے بیان میں کہا کہ ڈاکٹروں نے پاکستانی مریض کے دل کی حالت میں ٹھہراؤ پر الیکٹرک کیتھیٹر طریقہ کار سے گزارا تاکہ دل کی دھڑکن دوبارہ تیز نہ ہو، ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ اچانک دل کی دھڑکن تیز ہوجائے تو ایسی صورت میں موت واقع ہوجاتی ہے۔

وزارت صحت نے بتایا کہ پاکستانی عازم حج کی صحت مسلسل بہتر ہو رہی ہے اوراسے آئی سی یو میں رکھا گیا ہے تاکہ 24 گھنٹے صورتحال پر نظر رکھی جاسکے۔

یاد رہے کہ سعودی حکومت تمام حج اورعمرہ زائرین کی صحت کے لیے خصوصی سہولیات فراہم کرتی ہے،سعودی محکمہ صحت کے مطابق رواں حج سیزن میں ابتک 43 ہزار سے زائد عازمین طبی سہولیات سے استفادہ کرچکے ہیں۔

کورونا پابندیوں میں نرمی کے بعد اس سال دنیا بھر سے 10 لاکھ مسلمان حج کی سعادت حاصل کریں گے۔

HAJJ 2022

Holy Mosque Mecca

Tabool ads will show in this div