میڈیکل بورڈ نے دعا زہرا کی عمر 15 سال قرار دے دی

میڈیکل بورڈ کی سربمہر رپورٹ جوڈیشل مجسٹریٹ ایسٹ آفتاب احمد بگھیو کی عدالت میں جمع کرائی گئی

دعا زہرا کی عمر کے تعین کے لیے میڈیکل رپورٹ عدالت میں پیش کردی گئی ہے جس میں لڑکی کی عمر 15 سال کے قریب قرار دی گئی ہے۔

دعا زیرا کے والد مہدی کاظمی کی درخواست پر محکمہ صحت سندھ نے دعا زہرا کی عمر کے تعین کے لیے 10 رکنی بورڈ تشکیل دیا تھا۔

میڈیکل بورڈ نے دعا زہرا کی عمر کے تعین کے لئے ہڈیوں اور دانتوں کے ایکسرے، خون کے ٹیسٹ اور جسمانی معائنے سمیت دیگر ٹیسٹ کئے تھے۔

میڈیکل بورڈ کی سربراہ پروفیسر صبا سہیل کی جانب سے سربمہر میڈیکل رپورٹ جوڈیشل مجسٹریٹ ایسٹ آفتاب احمد بگھیو کی عدالت میں جمع کرائی۔

رپورٹ کے مطابق دانتوں کے معائنے کے مطابق دعا زہرا 13 سے 15 سال کے درمیان جبکہ ریڈیولوجیکل معائنے کے مطابق 16 سے 17 سال کی ہے۔ میڈیکل بورڈ میں شامل ماہرین نے اتفاق کیا ہے کہ دعا کی عمر 15 سے 16 سال کے درمیان ہے۔

میڈیکل بورڈ نے مہدی کاظمی کے وکیل جبران ناصر کو میڈیکل رپورٹ کی تفصیلات سے آگاہ کردیا تھا، جب کہ سماء ڈیجیٹل نے بھی میڈیکل رپورٹ کے مندرجات کی آزادانہ طور پر تصدیق کرائی ہے۔

اپنی ٹوئٹ میں جبران ناصر نے کہا کہ میڈیکل بورڈ کی رپورٹ کے مطابق دعا زہرا کی عمر 15 سال کے قریب ہے جو پچھلی میڈیکل رپورٹ کی نفی کرتی ہے جس میں دعا کی عمر 17 سال بتائی تھی۔

مہدی کاظمی کے وکیل کا کہنا ہے کہ نئی عمر کے تعین کا مطلب ہے کہ اس معاملے میں اغوا، کم سن بچوں کی شادی، اور جنسی جرائم کے جرائم کی تمام دفعات لاگو ہوتی ہیں۔

DUA ZEHRA

dua zehra case

Tabool ads will show in this div