اس سال خطبہ حج اردو زبان میں بھی نشر کیا جائے گا

رواں سال 4 مزید زبانوں کو شامل کیا گیا

سعودی وزارت مذہبی امور کا کہنا ہے کہ رواں سال خطبہ حج 14 زبانوں میں براہ راست نشر کیا جائے گا۔

سعودی عرب میں عیدالاضحی 9 جولائی کو منائی جائے گی جبکہ حج کا رکن اعظم وقوف عرفہ 8 جولائی کو ادا کیا جائے گا۔ امکان ہے کہ دنیا بھر میں 200 ملین لوگوں خطبہ حج سنیں گے۔

مکہ اور مدینہ کی مساجد کے صدر عبدالرحمان السدیس کا کہنا ہے کہ مملکت کی قیادت مسجد نبوی اور الحرام کی خدمات کی ترقی کیلئے لامحدود تعاون کی پیشکش کر رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ خطبہ عرفات کا لائیو ترجمہ اپنے پانچویں سال میں داخل ہو رہا ہے، اس منصوبے کو 14 زبانوں میں شامل کرنے کے لیے وسعت دی گئی ہے۔

جمعرات کو النمرا مسجد میں لائیو ترجمہ سائٹ کے میڈیا ٹور کے بعد ایوان صدر کے ہیڈ کوارٹرز میں حکام کی جانب سے اس منصوبے پر میڈیا بریفنگ بھی دی گئی۔

اس پراجیکٹ کے آغاز پر پہلے سال میں 1 ملین، دوسرے میں 11 ملین، تیسرے میں 50 ملین، چوتھے میں 100 ملین لوگوں نے براہ راست خطبہ حج سنا تھا، جب کہ رواں سال 2022 میں دنیا بھر میں 200 ملین لوگوں تک یہ خطبہ براہ راست پہنچایا جائے گا۔

اس سال خطبہ حج انگلش، فرانسیسی، ملائے، اردو، فارسی اور روسی سمیت دیگر زبانوں میں نشر کیا جائے گا، خطبہ حج چینی، بنگالی، ترک، اسپینش، ہندی، تامل اور سواہلی زبان میں بھی نشرہوگا،اس سال خطبہ حج میں چار نئی زبانیں شامل کی گئی ہیں۔

دریں اثنا سعودی عرب کے پبلک سیکیورٹی محکمے کے ترجمان کے مطابق حج سیزن کے دوران قواعد اورقانون پر عمل درآمد کروانے کے لئے مقامات مقدسہ کے اندر اور اطراف کی سڑکوں پر سیکیورٹی فورسز تعینات کی جائیں گی۔

واضح رہے کہ سیکورٹی فورسز اب تک 19 افراد کو حج سے متعلق جعلی اشتہارات اورفراڈ کے الزام میں گرفتارکرچکی ہیں۔

رواں سال دنیا بھر کے 10 لاکھ عازمین حج کی سعادت حاصل کریں گے۔

کرونا وباء کے باعث 2020ء اور 2021ء میں محدود پیمانے پر حج کا اجتماع ہوا تھا۔ رواں سال پہلی مرتبہ بیرون ممالک سے حاجیوں کو سعودی عرب آنے کی اجازت دی گئی ہے۔

پاکستان کا اس سال حج 82 ہزار افراد پر مشتمل ہے، جس میں 32 ہزار سرکاری اسکیم کے تحت جبکہ باقی پرائیوٹ حج کررہے ہیں۔

Hajj sermon

HAJJ 2022

FOREIGN LANGUAGES

Tabool ads will show in this div