اداکارہ صوفیہ مرزا نے خود بیٹیاں شوہر کے حوالے کیں، معاہدہ سامنے آگیا

بچیوں کی حوالگی کیلئے صوفیہ مرزا کو 50 پچاس لاکھ روپے ادا کئے، عمر فاروق

جڑواں بیٹیوں کی حوالگی کا مطالبہ کرنے والی اداکارہ صوفیہ مرزا نے رضا مندی سے بچیاں سابق شوہر کے حوالے کیں – شیخ عمر فاروق اور صوفیہ مرزا کے درمیان ہونے والے معاہدے کی کاپی سماء نے حاصل کرلی۔ سابق شوہر کا کہنا ہے کہ بچیوں کی حوالگی کیلئے صوفیہ مرزا کو 50 لاکھ روپے ادا کئے۔ دوسری طرف عمر فاروق نے ریڈ وارنٹس اور مقدمات ختم کرنے کیلئے وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ کو خط لکھ دیا۔

گزشتہ روز اداکارہ صوفیہ مرزا کی جانب سے شہزاد اکبر کے ساتھ مل کر اپنے سابق شوہر عمر فاروق کیخلاف مقدمات بنانے کا انکشاف ہوا تھا۔ سماء ڈیجیٹل سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے بچیوں کی حوالگی سے متعلق معاملے پر ہر حد تک جانے کا اعلان کیا تھا۔

نمائندہ سماء نے اداکارہ صوفیہ مرزا اور ان کے شوہر عمر فاروق کے درمیان بچیوں کی حوالگی سے متعلق ایک معاہدے کی کاپی حاصل کرلی، جس سے پتہ چلتا ہے کہ صوفیہ مرزا نے رضا مندی سے بچیاں سابق شوہر کے حوالے کیں۔

اداکارہ اور ان کے شوہر کے درمیان معاہدہ 2007ء میں 2 گواہوں کی موجودگی میں کیا گیا تھا۔ سابق شوہر کے کے مطابق صوفیہ مرزا نے بیٹیوں کی حوالگی کیلئے 50 لاکھ روپے وصول کئے، اداکارہ نے رقم کا ذکر معاہدے میں نہ کرنے کی شرط بھِی رکھی۔

سماء سے گفتگو کرتے ہوئے شوہر شیخ عمر فاروق کا کہنا ہے کہ شہزاد اکبر کے ساتھ مل کر صوفیہ مرزا نے ان کے خلاف جعلی مقدمات بنائے، شہزاد اکبر کے بھائی اور مرحوم ڈاکٹر رضوان میرے پیچھے لگ گئے، مجھ سے کہا لین دین کرلو معاملات حل کرادیں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ صوفیہ مرزا نے معاہدے کے تحت بچوں کو 50 لاکھ روپے کے عوض حوالے کیا، اب وہ معاہدے سے مکر گئی ہے۔

دوسری جانب اداکارہ صوفیہ مرزا اور ان کی بیٹی زنیرہ کے درمیان ہونیوالی مبينہ گفتگو سامنے آگئی، جس میں سنا جاسکتا ہے کہ بیٹی ماں کے ساتھ رہنے سے انکار کررہی ہے۔

زنیرہ کا گفتگو میں صوفیہ مرزا سے کہنا ہے کہ آپ صرف ہمیں استعمال کررہی ہیں، ہم آپ کے ساتھ نہیں رہنا چاہتے نہ پاکستان آنا چاہتے ہیں۔

پاکستان

Shehzad Akbar

SOFIA MIRZA

Tabool ads will show in this div