جج نے اینکر بیوی کو قتل کرکے چہرہ تیزاب سے جلادیا

اسکارف سے ان کا گلا گھونٹ کر قتل کیا گیا

مصر میں جج ایمن حجاج نے اپنی بیوی صائمہ جمال کو قتل کرکے اس کا چہرہ تیزاب سے جلادیا۔

غیرملکی میڈیا رپورٹس کےمطابق ایمن حجاج اور صائمہ جمال کو جون کے اوائل میں ایک شاپنگ مال کے باہرآخری بار ایک ساتھ دیکھا گیا تھا۔

اس کےبعد ایمن حجاج نے اپنی بیوی صائمہ جمال کو سر پر بندوق کے وار کرکے زخمی کیا اور اسکارف سے ان کا گلا گھونٹ کر قتل کردیا۔

اس کیس کے گواہ کے وکیل ابراہیم طنطاوی نے بتایا کہ قتل کا یہ واقعہ فارم ہاؤس پر پیش آیا۔ صائمہ جمال ٹی وی پر کام کرتی تھیں اور ان کے شوہر ایمن حجاج نے 20 جون کو ان کی گمشدگی کی جھوٹی رپورٹ درج کروائی تھی۔ اس رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ وہ ہیئرڈریسر کے پاس گئیں تھیں جس کے بعد ان کا کوئی پتہ نہیں چلا۔

گواہ کے وکیل نے بتایا کہ ایمن اور صائمہ کی شادی 8 برس قبل ہوئی تھی اور وہ ان کے دوسری بیوی تھی۔ ایمن نے یہ شادی خفیہ رکھی اور صائمہ نے دھمکی دی تھی کہ وہ ایمن کی پہلی بیوی کو اس شادی سے متعلق بتادے گی۔

وکیل ابراہیم طنطاوی نے مزید بتایا کہ قتل کے اس واقعے کے بعد ایمن حجاج نے ان کو موکل کو بھی زدوکوب کیا اور حراست میں رکھا تاہم وہ فرار ہونے میں کامیاب ہوا اور اس نے پولیس کو اس واقعے کی اطلاع دی۔

وکیل ابراہیم طنطاوی نے بتایا کہ پولیس نے اس جرم میں حصہ دار ہونے کی بنیاد پر ان کے موکل کو حراست میں رکھا ہوا ہے تاہم مرکزی ملزم ایمن حجاج فرار ہے اور شبہ ہے کہ وہ متحدہ عرب امارات میں روپوش ہے۔

Tabool ads will show in this div